پیپلزپارٹی نے خواتین کی مخصوص نشست کیلئے انگلش بولنا لازمی شرط قراردےدی

پیپلزپارٹی نے خواتین کی مخصوص نشست کیلئے انگلش بولنا لازمی شرط قراردےدی
پیپلزپارٹی نے خواتین کی مخصوص نشست کیلئے انگلش بولنا لازمی شرط قراردےدی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)پیپلزپارٹی نے خواتین کی مخصوص نشست کیلئے انگلش بولنا لازمی شرط قرار دے دی۔

نجی ٹی وی چینل دنیا نیوز کے مطابق پیپلزپارٹی کی قیادت نے فیصلہ کیا ہے کہ اسمبلی میں ایسی خواتین کو لایا جائے جنہیں انگلش اچھی طرح بولنا آتی ہے کیونکہ اس بارسابق صدر آصف علی زرداری کی صاحبزادی آصفہ بھٹو بھی اسمبلی میں ہوں اور اردو سمجھنے میں مشکل کا سامنا ہے اس لئے اسمبلی میں ایسی خواتین ہونی چاہئے جو انگریزی میں بول سکیں تاہم آصفہ بھٹو کو پتہ چل سکے کہ اسمبلی میں کیا کارروائی چل رہی ہے۔

واضح رہے کہ فریال تالپوراورآصفہ بھٹوبھی مخصوص نشست پرپیپلزپارٹی کی امیدوارہوں گی جبکہ ہیرسوہو اورنازبلوچ کوبھی مخصوص نشست ملے گی،ان کے علاوہ شہلارضاالیکشن بھی لڑیں گی اورمخصوص نشست کی امیدواربھی ہوں گی جبکہ روبینہ قائم خانی،شرمیلافاروقی،ارم خالدانگلش آتے ہوئے بھی مخصوص نشست سے محروم رہیں لیکن روبینہ قائم خانی کی والدہ کوصوبائی اسمبلی کی مخصوص نشست ملے گی۔

مزید : قومی /علاقائی /سندھ /کراچی