تحریک انصاف کا وہ کارکن جس نے الیکشن لڑنے کے لیے برطانوی شہریت چھوڑ دی ،لیکن اس کی جگہ ٹکٹ کسے دے دیا گیا ؟ایسی خبر آگئی کہ لندن میں پاکستانی احتجاج کرتے سڑکوں پر آگئے

تحریک انصاف کا وہ کارکن جس نے الیکشن لڑنے کے لیے برطانوی شہریت چھوڑ دی ،لیکن ...
تحریک انصاف کا وہ کارکن جس نے الیکشن لڑنے کے لیے برطانوی شہریت چھوڑ دی ،لیکن اس کی جگہ ٹکٹ کسے دے دیا گیا ؟ایسی خبر آگئی کہ لندن میں پاکستانی احتجاج کرتے سڑکوں پر آگئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )تمام سیاسی جماعتوں کی جانب سے آئندہ عام انتخابات کے لیے تیاریاں کی جا رہی ہیں اور پارٹی ٹکٹس تقسیم کرنے کا مرحلہ چل رہا ہے لیکن اس کڑے مرحلے میں تحریک انصاف بوکھلاہٹ کا شکارنظر آرہی ہے ۔ کراچی سے معروف میزبان اور تحریک انصاف کے رہنما ڈاکٹر عامر لیاقت کو کراچی کی صوبائی نشست کی ٹکٹ نہیں دی گئی لیکن ب انہوں نے سوشل میڈ یا پر واویلا مچایا اور اپنا فیصلہ سنانے کی دھمکی دی تو عمران خان نے فوری انہیں فون کر کے بنی گالا طلب کیا ،ادھر ایبٹ آباد میں بھی چیف الیکشن کمشنر کے کزن وقار نبی کو صوبائی نشست کی ٹکٹ دے دی گئی جس پر کئی سوالات کھڑے ہو رہے ہیں۔ گوجرانوالہ کے حلقہ این اے 84 سے سیکریٹری الیکشن کمیشن بابر یعقوب کے بھائی ڈاکٹر عامر سے ٹکٹ واپس لے کر رانا بلال اعجاز کو دیدیا ۔اب خبر سامنے آرہی ہے کہ تحریک انصاف نے اپنے ایک ایسے جیالے کارکن کو پارٹی ٹکٹ نہیں دیا جس نے الیکشن لڑنے کے لیے اپنی برطانوی شہریت چھوڑ دی ۔

مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر معروف صحافی مرتضیٰ علی شاہ نے بتا یا کہ پاکستان کی کاروباری شخصیت اور سابق سٹوڈنٹ لیڈر عاطف چوہدری نے 5سال پہلے عمران خان کی جانب سے پارٹی ٹکٹ دینے کے وعدے پر برطانوی شہریت چھوڑی ۔پھر عاطف چوہدری برطانیہ چھوڑ کر پاکستان آگئے اور اپنے حلقے میں دن رات محنت کی لیکن تحریک انصا ف نے انہیں ٹکٹ دینے سے انکار کردیا اور این اے 127سے ان کی جگہ جمشید اقبال چیمہ کو ٹکٹ دے دیا گیا ۔

دوسری جانب صحافی اظہر جاوید نے بتا یا ہے کہ آج لندن الفورڈ میں تحریک انصاف کے پرانے رکن عاطف چوہدری کو ٹکٹ نہ ملنے پر احتجاج ہوگا پارٹی کی خاطر برطانوی شہریت چھوڑنے والے کو ٹکٹ دینے سے انکار کردیا گیا،انہوں گزشتہ انتخابات میں لاہور سے پارٹی ٹکٹ پر حصہ لیاپانچ سال سے حلقہ127 میں انتخابی مہم چلا رہے تھے ۔

مزید : قومی