”اگر وہ گھر واپس آ گیا تو میں۔۔۔“ بھارتی فوجیوں نے کشمیری مجاہد کے گھر والوں کو اسے ہتھیار ڈالنے پر رضامند کرنے کو کہا تو اس کی بہن نے آگے سے کیا جواب دیا؟ ویڈیو نے سوشل میڈیا پر ایسا تہلکہ مچایا کہ بھارتیوں کی ”چیخیں“ نکل گئیں

”اگر وہ گھر واپس آ گیا تو میں۔۔۔“ بھارتی فوجیوں نے کشمیری مجاہد کے گھر والوں ...
”اگر وہ گھر واپس آ گیا تو میں۔۔۔“ بھارتی فوجیوں نے کشمیری مجاہد کے گھر والوں کو اسے ہتھیار ڈالنے پر رضامند کرنے کو کہا تو اس کی بہن نے آگے سے کیا جواب دیا؟ ویڈیو نے سوشل میڈیا پر ایسا تہلکہ مچایا کہ بھارتیوں کی ”چیخیں“ نکل گئیں

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

سرینگر (ڈیلی پاکستان آن لائن) مقبوضہ کشمیر کے نوجوان آزادی کی خاطر اپنے جانیں قربان کرنے میں مصروف ہیں اور بھارتی فوجیوں کی بندوقیں بھی ان کے عزم و حوصلے کو کم نہیں کر سکتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔مسجد حرم الحرام میں خودکشی کرنے والے پاکستانی شخص کی چھلانگ لگاتے ہوئے ویڈیو سامنے آ گئی، دیکھنے والوں کی خوف سے جان ہی نکل گئی، سوشل میڈیا پر تہلکہ مچ گیا 

ناصرف یہ نوجوان اپنی ماﺅں، بہنوں بیٹیوں کی حرمت اور آزادی پر مرمٹنے کو تیار ہیں بلکہ کشمیری خواتین کا جذبہ بھی قابل دید ہے جس کی ایک مثال یہ ویڈیو ہے جس نے سوشل میڈیا پر تہلکہ مچا دیا ہے اور بھارتیوں کی ”چیخیں“ نکل گئی ہیں کہ ایک کشمیری خاتون کا یہ حوصلہ ہے تو مردوں کی کیا ہمت و عزم ہو گا۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی اس ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بھارتی فوجی ایک کشمیری مجاہد کے گھر پر موجود ہیں اور انہیں کہہ رہے ہیں کہ وہ اسے ہتھیار ڈالنے پر رضامند کریں گے لیکن آگے سے اس دلیر مجاہد کی بہن بھارتی فوجی کو ایسا جواب دیتی ہے کہ وہ اپنا سا منہ لے کر رہ جاتا ہے۔ دونوں کے درمیان ہونے والی گفتگو کو مکالمے کے طور پر پیش کیا جا رہا ہے تاکہ قارئین کو باآسانی پڑھ اور سمجھ سکیںے۔

بھارتی فوجی: جب آپ بولو گے تب ہی وہ ہتھیار ڈالے گا۔ ہمارے کہنے پر وہ ہتھیار نہیں ڈالے گا۔

بہن: مطلب کیوں بلائیں گے آپ؟

بھارتی فوجی: کبھی وہ پھنس گیا کہیں تو ہم آپ کو بلائیں گے تاکہ آپ اسے کہیں کہ ہتھیار پھینک دے اور خود کو بھارتی فوج کے حوالے کر دے ۔

بہن: ہم تو نہیں بولیں گے انہیں ہتھیار ڈالنے کیلئے۔

بھارتی فوجی: نہیں بولو گے آپ؟

بہن: اگر وہ گھر زندہ واپس آ جائے تو میں خود اس کو شہید کر دوں گی، خود اپنے ہاتھوں سے ۔ وہ گھر کا ہی بچہ ہے لیکن اب دین اور اللہ کے راستے میں نکلا ہے۔ ہمیں کیا ضرورت ہے ان کو واپس بلانے کی ، ہم کیوں انہیں واپس بلائیں۔ ہمیں کوئی ضرورت نہیں ہے۔

بھارتی فوجی: کبھی کبھی کوئی بھٹک جاتا ہے، غلط راستے پر نکل جاتا ہے۔ کوئی لڑائی جھگڑا ہو گیا ہو، ہمارے ساتھ ہو گیا ہو۔

بہن: نہ لڑائی ہے، نہ جھگڑا ہے، نہ غلط راستہ ہے، جو بھی کیا جیسے بھی کیا، مجھے نہیں پتا لیکن وہ اپنی مرضی سے چلے گئے۔ ان کو لگ رہا تھا کہ میں نے اچھا کیا، اچھا ہی کیا ہو گا، ہمیں کیا لینا دینا ہے، چلے گئے، اب اسی روز ان کا منہ دیکھیں گے جب وہ شہید ہو کر آئیں گے، اگر وہ زندہ آ جائیں تو اس کی گردن کاٹ دیں گے، خود اپنے ہاتھوں سے۔

بھارتی فوجی: ہتھیار اٹھانے ہی کس لئے ہیں؟ مجھے تو یہ سمجھ میں نہیں آتا ، ہتھیار کیوں اٹھانا ہے؟

بہن: آپ لوگ کیوں ہتھیار اٹھاتے ہیں؟

بھارتی فوجی: ہم لوگ تو آپ کی حفاظت کیلئے اٹھاتے ہیں، اپنا وطن ہے اور اس کی حفاظت کیلئے اٹھاتے ہیں۔

بہن: اگر وہ ہتھیار نہیں اٹھائیں گے تو اللہ کو کیسے پتہ چلے گا کہ انہوں نے اپنی جان دی یا نہیں؟ آپ لوگ ایسے تو نہیں ان کو شہید کرو گے۔ جب وہ ہتھیار اٹھائے گا، یہ ثابت کرے گا کہ میں اللہ کے راستے میں ہوں تب ہی آپ اسے شہید کرو گے۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید : قومی /ڈیلی بائیٹس