ا سرائیلی عقوبت خانے سانپوں اور بچھووں کا مسکن بن گئے

ا سرائیلی عقوبت خانے سانپوں اور بچھووں کا مسکن بن گئے
ا سرائیلی عقوبت خانے سانپوں اور بچھووں کا مسکن بن گئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

مقبوضہ بیت المقدس (اے این این ) ا سرائیلی عقوبت خانے سانپوں اور بچھووں کا مسکن بن گئے۔جیلوں میں صفائی کے ناقص انتظامات کی وجہ سے فلسطینی قیدی وبائی امراض میں مبتلا ہیں۔

فلسطینی میڈیا رپورٹ کے مطابق اسیران سٹڈی سینٹر کی طرف سے جاری کی گئی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اسرائیل کی تمام جیلیں بالخصوص جزیرہ نما النقب، ایچل، الرملہ، نفحہ، بئر سبع، الدامون، شطہ اور عسقلان میں صفائی کا نظام انتہائی ناقص ہے جس کے نتیجے میں نہ صرف فلسطینی قیدی وبائی امراض کا شکار ہو رہے ہیں بلکہ جیلیں موذی جانوروں اور کیڑے مکوڑوں سے بھر چکی ہیں۔فلسطینی اسیران سٹڈی سینٹر کے ڈائریکٹر رافت حمدونہ نے بتایا کہ صہیونی جیلر قید خانوں میں گندگی اور کیڑے مکوڑوں کو فلسطینیوں کو اذیتیں دینے کے ایک حربے کے طورپر استعمال کرتے ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ جیلوں میں سانپ، زہریلے بچھو، کاکروچ اور پسو عام ہیں۔ بئر سبع، النقب اور متعدد دوسری جیلوں میں قیدیوں کی طرف سے سانپوں اور بچھوں کی موجودگی کی شکایات کی گئی ہیں۔حمدونہ نے کہا ہے کہ ایسے لگتا ہے کہ صہیونی جیلر ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت جیلوں میں سانپ اور بچھو پال رہے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی