’اس دن رات کو میں گھر پر اکیلی تھی اور نہا رہی تھی، میرے فون کی گھنٹی بجی، بھاگ کر فون اُٹھایا تو۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے ایسا واقعہ سنادیا کہ جان کر آپ کو بھی ڈر لگنے لگ جائے

’اس دن رات کو میں گھر پر اکیلی تھی اور نہا رہی تھی، میرے فون کی گھنٹی بجی، ...
’اس دن رات کو میں گھر پر اکیلی تھی اور نہا رہی تھی، میرے فون کی گھنٹی بجی، بھاگ کر فون اُٹھایا تو۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے ایسا واقعہ سنادیا کہ جان کر آپ کو بھی ڈر لگنے لگ جائے

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) خواتین کی ویب سائٹ Mumsnetپرایک تھریڈ میں خواتین اپنے ساتھ پیش آنے والے پراسرار واقعات دوسروں کے ساتھ شیئر کر رہی ہیں۔ اس تھریڈ میں ایک لڑکی نے اپنے ساتھ پیش آنے والا ایسا خوفناک واقعہ سنایا ہے کہ پڑھنے والی خواتین بھی خوفزدہ ہو گئیں۔ میل آن لائن کے مطابق اس لڑکی نے بتایا کہ ”میرا شوہر کام کے سلسلے میں ملک سے باہر گیا ہوا تھا اور میں فلیٹ میں اکیلی تھی۔ اس رات میں نہا رہی تھی کہ ہمارے لینڈ لائن فون کی گھنٹی بجی۔ میں نے آ کر فون اٹھایا تو دوسری طرف میری ماں تھی جو سخت پریشان تھی اور چیخ کر بولی کہ ”یہ تم کیا کر رہی ہو؟“ میں نے پوچھا کہ ”میں نے کیا کیا ہے؟“ تو انہوں نے بتایا کہ ”میں نے تمہیں کال کی جو تم نے ریسیو کی لیکن بات نہیں کی، تمہاری طرف سے بھاری اور انتہائی تیز سانسوں اور سرگوشیوں کی آواز آ رہی تھی جن کی مجھے کچھ سمجھ نہیں آئی۔ میں یہ سن کر سٹپٹا کر رہ گئی کیونکہ میں تو کافی دیر سے باتھ روم میں تھی اور میں نے اپنی والدہ کی کوئی کال ریسیو ہی نہیں کی تھی۔ میں نے جلدی سے اپناموبائل فون چیک کیا تو کیا دیکھتی ہوں کہ لگ بھگ دو منٹ پہلے میری ماں کی کال آئی تھی جو ریسیو بھی کی گئی تھی۔ یہ دیکھ کر خوف میرے رگ و پے میں اتر گیا کیونکہ میرے علاوہ فلیٹ میں کوئی اور موجود نہیں تھا۔ میں نے اپنی ایک دوست کو کال کرکے فوری طور پر اپنے پاس بلایا اور وہ رات میری دوست میرے ساتھ فلیٹ پر رہی۔ آج بھی جب یہ واقعہ یاد آتا ہے تو میرے جسم میں خوف کی ایک لہر سی دوڑ جاتی ہے۔“

اس تھریڈ میں ایک اور خاتون نے لکھا ہے کہ ”10سال قبل میں اپنے اپارٹمنٹ میں سو رہی تھی کہ مجھے اچانک کسی بچے کے رونے کی آواز آئی۔ ایسے لگ رہا تھا جیسے بچہ میرے کمرے کی کھڑکی کے باہر رو رہا ہے۔ میں نے دروازہ کھولا اور باہر نکل کر دیکھا تو مجھے وہاں کچھ بھی نظر نہیں آیا۔ اس واقعے کے 6مہینے بعد شہر میں خواتین کے ساتھ جنسی زیادتی کرنے اور گھروں میں ڈکیتیاں کرنے والا ایک گینگ پکڑا گیا اور معلوم ہوا کہ یہ اس گینگ کی چال تھی۔ وہ گھر کے باہر جا کر بچے کے رونے کی آواز نکالتے تاکہ اندر موجود خاتون باہر آئے اور پھر وہ اسے پکڑ کر جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالتے۔ آج بھی یہ واقعہ مجھے خوفزدہ کر دیتا ہے تاہم میں خود کو خوش قسمت بھی سمجھتی ہوں کہ بوجوہ میں ان مجرموں سے بچ گئی حالانکہ میں بھی گھر سے باہر نکل آئی تھی۔“ایک اور خاتون نے لکھا ہے کہ ”میری ماں کو فوت ہوئے 10سال گزر چکے ہیں۔ چند ماہ قبل میں اپنے کمرے میں بیڈ پر لیٹی سونے کی کوشش کر رہی تھی کہ اچانک میری ماں میرے سرہانے آ کر بیٹھ گئی اور میرے بالوں میں انگلیاں پھیرتے ہوئے کہنے لگی کہ ”تم لوگوں کو کیوں معلوم ہونے دیتی ہو کہ تم بہت اچھی لڑکی ہو؟“ یہ کہہ کر وہ ایک روشنی کے ہالے میں تبدیل ہو کر وہاں سے غائب ہو گئی۔ یہ سب میری آنکھوں کے سامنے ہوا اور مجھے خود بھی اپنی آنکھوں پر یقین نہیں آتا کہ میں نے کیا دیکھا۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس /بین الاقوامی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...