”میں نے ایک لاکھ روپے بچا یا تھا کہ ’iPhoneX‘لے سکوں لیکن پھر دفتر میں ۔۔۔“پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے سربراہ عمر سیف نے ایسا شاندار کارنامہ سرانجام دے دیا کہ آپ کے لیے بھی یقین کرنا مشکل ہوجائے گا 

”میں نے ایک لاکھ روپے بچا یا تھا کہ ’iPhoneX‘لے سکوں لیکن پھر دفتر میں ...
”میں نے ایک لاکھ روپے بچا یا تھا کہ ’iPhoneX‘لے سکوں لیکن پھر دفتر میں ۔۔۔“پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے سربراہ عمر سیف نے ایسا شاندار کارنامہ سرانجام دے دیا کہ آپ کے لیے بھی یقین کرنا مشکل ہوجائے گا 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے سربراہ عمر سیف نے اپنے دفتر میں ایک لاکھ روپے عیدی بانٹ دی ۔مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر عمر سیف نے بتا یا کہ ”میں نے ایک لاکھ روپے بچائے تھے کہ اس عید پر نیا ’iPhoneX‘خرید لوں ۔پھر دفتر میں کسی نے کہا سر میری عیدی ؟،یہ سچ ہے کہ ان پیسو ں پر سب سے زیادہ حق ہمارے پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے سپورٹ سٹاف کا تا ،آج اپنے 200لوگوں کو عیدی دے کر موبائل لینے سے کئی زیادہ خوشی ہوئی ہے ۔“

ڈی کے شعبے میں یہ پہلی انٹرنیشنل یونیسکو چیئر ہے اس سے پاکستان کو انفارمیشن ٹیکنالوجی برائے ترقی کا سنٹر آف ایکسی لینس بننے میں مدد ملے گی۔ ڈاکٹر عمر سیف پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے سربراہ ہیں اور پنجاب میں تمام پبلک سیکٹر آئی ٹی منصوبوں کی نگرانی کر رہے ہیں انہوں نے میساچوسٹس انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی اور کیمرج یونیورسٹی سے گریجوایشن کی۔ وہ پہلے پاکستانی ہیں جنہیں گوگل فیکلٹی ریسرچ ایوارڈ ملا اس کے علاوہ انہیں ایم آئی ٹی ٹیکنوویئر ایوارڈ مائیکروسوفٹ ریسرچ ڈیجیٹل انکلوڑن ایوارڈ برٹش کونسل آوٹ سٹینڈنگ سالانہ ایوارڈ 2017 بھی مل چکا ہے ڈاکٹر عمر سیف نے کہا کہ ان کی تقرری پاکستان کے لئے اعزاز اور ہمارے کام کا اعتراف ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس