دریائی علاقوں میں جرائم پیشہ افراد کی خفیہ کمین گاہوں کا انکشاف ،پولیس کا داخلہ بند

دریائی علاقوں میں جرائم پیشہ افراد کی خفیہ کمین گاہوں کا انکشاف ،پولیس کا ...

ملتان( وقا ئع نگار )جلال پور پیر والا دریائی بیٹ کے علاقے بھی جرائم پیشہ افراد کی آماجگاہ ہیں بن گئیں۔پولیس کی موثر کاروائیاں نہ ہونے کے باعث بیشتر کمین گاہیں علاقہ غیر میں تبدیل ہیں جبکہ مقامی پولیس بھی ان جرائم پیشہ افراد کے خلاف قانونی کاروائی کرنے سے گھبراتے ہیں۔اس بارے میں معلوم ہوا ہے کہ جلال پور پیر والا کا دریائی بیٹ کا علاقہ بھی مظفر گڑھ اور ڈی جی خان۔راجنپور کی طرح کچہ کا علاقہ بنتا جا رہا ہے۔جہاں زیادہ تر جرائم پیشہ(بقیہ نمبر43صفحہ12پر )

 افراد نے اپنے اپنے مسکن بنائے ہوئے ہیں۔یہ جرائم پیشہ افراد عموما واردات کرنےکے بعد بیٹ کے علاقوں میں چلے جاتے ہیں۔جہاں ایک عام آدمی کا جانے کسی تصور سے کم نہیں۔انہیں وجوہات کی بنا پر یہ جرائم پیشہ افراد پولیس کے ہتھے نہیں چڑھتے۔اور کرائم کرتے رہتے ہیں۔ذرائع کا کہناہے کہ مقامی پولیس اکثر دریائی بیٹ والے علاقوں میں جانے سے اس لئے کتراتے ہیں۔کیونکہ وہ کہتے ہیں ہمیں اپنی جان پیاری ہے۔عوامی و سماجی افراد نے ارباب اختیار سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور پر دریائی بیٹ کے علاقوں میں جرائم پیشہ افراد کی نقل و حمل کو روکنا چاہیے۔اور اس بارے میں ٹھوس عملی اقدامات ہونے چاہیے۔

جرائم پیشہ عناصر

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...