ماموں کانجن ،مسجد میں امام پر تشدداور توڑ پھوڑ والاملزم گرفتار نہیں ہو سکا 

  ماموں کانجن ،مسجد میں امام پر تشدداور توڑ پھوڑ والاملزم گرفتار نہیں ہو ...

ماموں کانجن(نمائندہ پاکستان)مسجد میں پیش امام پر تشدداور توڑ پھوڑ کرنے والا مبینہ ملزم تاحال گرفتار نہیں ہو سکا نواحی گاﺅں555گ ب آبادی کاٹھیانوالہ کی مسجد کے پیش ملزم محمد عمران شاہد کے تھانہ ماموں کانجن میں تحریری درخواست جمع کرائی تھی کہ جمعہ کے روز اسی گاﺅں کے ایک شخص امان اللہ درسانہ نے مسلح ہو کر مسجد کے اندر ممبر رسول پر بیٹھے اس پر حملہ کیا غلیظ گالی گلوچ اور تشدد کا نشانہ بنایا آلاﺅڈ سپیکر کی تاریں ٹوڑ ڈالیں اور پسٹل لہراتے ہوئے نمازیوں کو بھگا دیا دیہہ ہذا کے نمبردار مہر چمن کاٹھیہ نے بھی واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے پولیس کی مبینہ لاپرواہی پر سوال اٹھایا ہے کہ وہ کل سے تھانے آئے ہوئے ہیں مگر پولیس با اثر ملزم کو پکڑنے اور اسکے خلاف کاروائی سے گریزاں ہے اس کے مطابق ملزم کو وقت کی کمی کے باعث نعت پڑھنے سے روکنے پر وہ مشتعل ہو گیا تھا جس نے امام اور مسجد کے تقدس کو پامال کیا انکوائری آفیسر ایس آئی محمد قاسم نے کہا ہے کہ وہ واقعہ کی انکوائری کر رہے ہیں جس کے بعد قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی 

مزید : علاقائی


loading...