عدالتی فیصلے سے قبل آصف زرداری کی گرفتاری کی باتیں غیر مناسب،ان ہاؤس تبدیلی سے فرق نہیں پڑتا ،جمہوریت ڈی ریل نہیں ہونی چاہئے:نثار کھوڑو

عدالتی فیصلے سے قبل آصف زرداری کی گرفتاری کی باتیں غیر مناسب،ان ہاؤس ...
عدالتی فیصلے سے قبل آصف زرداری کی گرفتاری کی باتیں غیر مناسب،ان ہاؤس تبدیلی سے فرق نہیں پڑتا ،جمہوریت ڈی ریل نہیں ہونی چاہئے:نثار کھوڑو

  

لاڑکانہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان پیپلزپارٹی سندھ کے صدر نثار کھوڑو نے کہا ہے کہ آصف زرداری پہلے بھی عدالتوں میں پیش ہوتے رہے ہیں اور اب بھی ہوں گے ،امید ہے عدالت آصف علی زرداری کی ضمانت قبل اَز گرفتاری کنفرم کرے گی،عدالت کے فیصلے سے قبل گرفتاری کی باتیں مناسب نہیں ہیں۔

لاڑکانہ پریس کلب میں پریس کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے نثار کھوڑو کا کہنا تھا کہ آصف علی زرداری کا مفاہمتی کردار نہ ہوتا تو این ایف سی ایوارڈ ملتا اور نہ ہی  صوبائی خودمختاری ملتی، ملک کو اب بھی مفاہمت کی ضرورت ہے۔نثارکھوڑو نے کہا کہ آج کی حکومت لڑاؤ اور تصادم کی پالیسی پر یقین رکھتی ہے جس کی وجہ سے ملک اور عوام کو نقصان پہنچ رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ لاڑکانہ جس طرح چارٹر آف ڈیموکریسی کی گئی اسی طرح چارٹر آف اکانامی ہونی چاہیئے،عالمی مارکیٹ میں پیٹرول کی قیمیت کم ہوئی ہیں مگر موجودہ حکومت ملک میں پیٹرول کی قیمتیں بڑھا کر عوام کا خون چوس رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ راتوں رات ڈالر کیوں مہنگا ہوا؟ حکومت اس کی حکومت وضاحت کرے،ڈالر مہنگا کرکے کس نے کتنا کمایا وہ بھی ظاہر کیا جائے؟ اکیلے اڑان کے حامی نہیں ہیں تمام جماعتیں اکٹھی ہوکر ملک کو بچا سکتی ہیں،حکومت تبدیل ہو یا ان ہاؤس تبدیلی ؟ اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا تاہم جمہوریت کو ڈی ریل نہیں کرنا چاہتے، حکومت تبدیل ہو سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کی تبدیلی سے جمہوریت کو کوئی خطرہ نہیں ہوگا،پی ٹی آئی نے مینڈیٹ چرایا ہے ،ایم کیو ایم وزارت لے کر مینڈیٹ چوری ہونے پر خاموش ہے، ان ہاؤس تبدیلی کے بہت طریقے ہیں، پیپلز پارٹی مقدمات سے نہیں چھپ رہی، بغیر سزا کے آصف علی زرداری نے 11 سال جیل کی قید کاٹی،حکومت مخالف تحریک کے متعلق جلد اے پی سی ہوگی ،جس میں اپوزیشن جماعتوں کیجانب سے متفقہ حکمت عملی طے ہوگی جس کے بعد آگے بڑھینگے۔انہوں نے کہا کہ شیخ رشید اپنی یہ زبان استعمال کرنا بند کریں ورنہ شیخ رشید کا سندھ والے وہ حشر  کریں گےجیسے ضیاءالحق کا کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ جسٹس فائز عیسی قاضی آئندہ کے چیف جسٹس ہونے تھے، اس لئے ان کو نشانہ نہیں بنانا چاہیئے تھا،علی محمد مہر کے انتقال کے بعد گھوٹکی کی قومی اسمبلی کی خالی نشت پر الیکشن شیڈول آنے کے بعد پیپلز پارٹی اپنے امیدوار کو نامزد کرے گی۔

مزید : علاقائی /سندھ /لاڑکانہ