کم فیس والے سکولوں کو مشروط طور پر کھولنے دیا جائے،میاں شفقت محمود

کم فیس والے سکولوں کو مشروط طور پر کھولنے دیا جائے،میاں شفقت محمود

  

چوہنگ (نامہ نگار) آل پاکستان پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن APPSA کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں شفقت محمود نے پریس کلب چوہنگ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پرائیویٹ سکولوں کی مسلسل بندش سے سکول مالکان شدید ڈپریشن کا شکارہیں۔تقریبا 90فیصد سکول کرائے کی بلڈنگ میں چل رہے ہیں۔لاک ڈاؤن کے باعث کم فیس لینے والے سکولز انتہائی مشکلات کا شکار ہیں۔کم فیس لینے والے پرائیویٹ سکولوں میں لاک ڈاؤن کے دوران فیس 10سے 35فیصد اکٹھی ہوتی ہے جبکہ سکول کے اخراجات کل فیس کا 85تا 90فیصد ہوتے ہیں حکومت نے 20فیصد فیس معاف کر دی ہے اور 2000سے کم فیس لینے والے پرائیویٹ سکولوں کو والدین اسی صورت فیس ادا کرتے ہیں جب ان کے بچے سکول جاتے ہیں یہ تاثر بالکل غلط ہے کہ والدین گھر بیٹھے بچوں کی ماہانہ فیس باقاعدہ ادا کر رہے ہیں، حکومت کم فیس لینے والے پرائیویٹ سکولوں کو کھولنے کے احکامات جاری کرے۔

یا مالی معاونت کا اعلان کریں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -