سندھ حکومت بجٹ میں صحت، زراعت کے شعبوں کو ترجیح دے، بلاول

    سندھ حکومت بجٹ میں صحت، زراعت کے شعبوں کو ترجیح دے، بلاول

  

کراچی (این این آئی)پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے حکومتِ سندھ کو ہدایت کی ہے کہ آئندہ صوبائی بجٹ میں غربت کے خاتمے کے لئے اقدامات اور صحت و زراعت کے شعبوں کو ترجیح دی جائے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ آئندہ بجٹ میں سندھ حکومت کا اہم ترین ایجنڈا کروناوائرس کی روک تھام اور ٹڈی دل کے حملوں کا سدباب ہونا چاہیے تاکہ انسانی جانوں کے تحفظ کے ساتھ ساتھ قحط کو روکا جاسکے۔ بلاول بھٹو زرداری نے یہ ہدایات پیر کو وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ، وزیراعلی کے کوآرڈینیٹر برائے سماجی تحفظ حارث گزدر، چیئرمین پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ وسیم احمد اور سیکرٹری خزانہ سید حسن نقوی کو ویڈیو کانفرنس کے ذریعے بریفنگ کے دوران دی۔وزیراعلی اور ان کی ٹیم نے چیئرمین کو کروناوائرس کے متعلق اسکیموں، سوشل سکیورٹی اور انسداد غربت کے پروگراموں کے متعلق آگاہ کیا۔ وزیر اعلی سندھ کا کہنا تھا کہ ٹڈی دل سے متاثر زرعی شعبے کے تدارک کے لئے چھوٹے کاشتکاروں کو برآمدی معیار کے چاول کے بیج، کھاد اور کیڑے مار ادویات پر سبسڈی دینے کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔ بلاول بھٹو زردداری نے کہا کہ حکومتِ سندھ کو اپنے محدود وسائل اور کئی بحران درپیش ہونے کے باوجود غریب دوست بجٹ تیار کرنا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ رواں مالی سال کے دوران وفاق کی جانب سے کم فنڈز فراہم کرنے کے باعث صوبائی حکومت عملی کو نقصان پہنچا ہے۔انہوں نے کہا کہ سندھ کو پی ٹی آئی حکومت سے 835 ارب روپے کے شیئر سے 229 ارب روپے کم وصول ہوئے۔ بلاول نے کہا کہ یہ سندھ اور دیگر صوبوں کے ساتھ بہت بڑا ظلم ہے۔چیئرمین پی پی نے وزیر اعلی سندھ اور ان کی ٹیم سے کہا کہ وہ کروناوائرس، ٹڈی دل کے حملوں اور وفاقی حکومت کی لاپرواہی و نا اہلی کے با وجود اپنے دستیاب اور محدود وسائل میں رہتے ہوئے غریبوں کے لئے عوام دوست بجٹ تیار کرے۔

بلاول

مزید :

صفحہ اول -