نوازشریف کی والدہ پر بھی قبضے کا الزام لیکن انہوں نے سماعت کے دوران کیا موقف اپنایا؟ خبرآگئی

نوازشریف کی والدہ پر بھی قبضے کا الزام لیکن انہوں نے سماعت کے دوران کیا موقف ...
نوازشریف کی والدہ پر بھی قبضے کا الزام لیکن انہوں نے سماعت کے دوران کیا موقف اپنایا؟ خبرآگئی

  

لاہور(ویب ڈیسک) سول جج رابعہ ریاض نے سابق وزیر اعظم نوازشریف کی والدہ کے خلاف درخواست کی سماعت کی جس میں درخواست گزار رابعہ روشن نے الزام لگایا ہے کہ بیگم شمیم اختر نے جاتی امرا کے علاقے میں اس کے خاندان کی 108 کنال اراضی پر قبضہ کیا ہوا ہے۔

عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ رجسٹری انتقال خارج کیا جائے۔ بیگم شمیم اختر نے موقف اختیار کیا کہ زمین 51لاکھ 84ہزار کے عوض خریدی، اراضی پر قبضے کا دعوی جھوٹ پر مبنی ہے، دعویدار خاتون رابعہ روشن نے ایک لمبے عرصے تک رجسٹری کوچیلنج نہیں کیا۔اب یہ دعوی مجھے اور میری فیملی کو بلیک میل کرنے کے لیے دائر کیا گیا، عدالت دعوے کو مسترد کرتے ہوئے درخواست گزار پر جرمانہ عائد کرے، عدالت نے فریقین کے وکلاءکو 15جولائی کو طلب کرلیا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -