حکومت نئے مالی سال میں ٹیکس کم کرے،رحمت اللہ جاوید

حکومت نئے مالی سال میں ٹیکس کم کرے،رحمت اللہ جاوید

  

لاہور(سٹی رپورٹر) ایمبیسیڈر رحمت اللہ جاوید نے قومی بجٹ مالی سال برائے 2021 ، 2022 میں سمال ٹریڈرز سیکٹر کیلئے ریلیف کو ملکی ترقی خوشحالی کیلئے ناگزیر قرار دیتے ہوئے کہا کہ حکومت نئے مالی سال میں ٹیکسوں کی شرح میں واضع کمی لے کر آئے۔ چھوٹے تاجروں چھوٹی صنعتوں دکانوں بازاروں مارکیٹوں کو ریلیف اور سبسڈیز دی جائیں۔ تاجروں کو آسان اقساط پر قرضے دینے کی پالیسیز لائی جائیں۔ چھوٹی صنعتیں ملکی معیشت کی بنیاد ہیں۔

 دکانیں مارکیٹیں بازار اس بنیاد کی طاقت ہیں۔ حکومت ملک میں معاشی عدم استحکام کی فضا کے خاتمے اور ترقی کی نئی روشن صبح کو پانے کیلئے چھوٹے تاجروں کو ریلیف دے۔ بزنس فرینڈلی شرائط و ضوابط پر سمال ٹریڈرز کو قرضے دے کر ملک میں غربت اور بے روزگاری کے گراف میں کمی لائی جائے۔ چھوٹی صنعتیں فعال اور بحال ہوں گی تو ملک میں روزگار کے مواقع بڑھیں گے۔ کاروبار چلنے سے گراس روٹ سطح پر مثبت معاشی اثرات رونما ہوں گے۔ وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نئے مالی سال کی بجٹ پالیسیوں میں تاجروں کے مسائل کیلئے ترجیحی بنیادوں پر ریلیف اور سبسڈیز رکھیں۔ چھوٹی صنعتوں اور سمال ٹریڈنگ سیکٹر کو اپنے پاوں پر کھڑا کرکے ملک میں معاشی بحران کو شکست دی جاسکتی ہے۔ سمال ٹریڈرز کے مسائل کو سنجیدہ بنیادوں پر لیتے ہوئے عوام دوست فیصلے کئے جائیں۔ نازک حالات اور مشکل ترین اقتصادی معاشی گھڑی میں چھوٹی صنعتوں کو بحران سے نکالنے کیلئے راستہ دیا جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -