حکومت ہر محاذ پر فلاپ، غریبوں کاسانس لینا مشکل، یوسف رضا گیلانی

حکومت ہر محاذ پر فلاپ، غریبوں کاسانس لینا مشکل، یوسف رضا گیلانی

  

ملتان (سٹی رپورٹر)سابق وزیراعظم سینٹ قائد حزب اختلاف مخدوم سید یوسف رضا گیلانی سے پاکستان مسلم لیگ فنکشنل کے مرکزی جوائنٹ سیکرٹری الحاج محمد اشرف(بقیہ نمبر1صفحہ6پر)

 قریشی اور سماجی شخصیت حاجی سلیم درباری نے گیلانی ہاؤس میں ملاقات کی قومی سیاسی سماجی علاقائی امور پر تبادلہ خیال کیا مخدوم سید یوسف رضا گیلانی نے کہا پاکستان اہم ایٹمی طاقت جہموری ریاست ہے جس کی بنیاد میں ہمارے بزرگوں اور برصغیر کے مسلمانوں کی جان و مال قربانیاں شامل ہے یہاں عوام کو ریلیف صرف ہمارے پیپلز پارٹی کی حکومت میں دیا گیا ہے  بے روزگاروں اور عوام کو نوکریاں چھت کی فراہمی کے علاوہ پر امن محفوظ ملک بنایا گیا لوگوں کو ملازمتیں اور خدمت کرنے کی ہمیں سزا دی گئی آج پھر وعدہ کرتے ہیں حکومت ملتے ہی لوگوں کی پہلے کی طرح خدمت کی جائے اس سلسلے میں میڈیا سیاسی سماجی مذہبی حلقوں کے تعاون کی ضرورت ہے آج ملک میں جو کچھ ہو رہا ہے اس کی وجہ سے ساری دنیا کے مسلمان پریشان ہیں مسئلہ کشمیر اور فلسطی مظلوم لوگوں کا مقدمہ بھی ہم نے لڑا فلسطین کشمیر کی آزادی کے لئے ہر قربانی دی جائے گی بلدیاتی انتخابات میں بھرپور حصہ لیں گے حکومت نے عوام کو ریلیف نہیں دیا انہوں نے عرصہ حیات تنگ کر دیا ہے۔قائد حزب اختلاف سینٹ و سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ ریلوے کا سانحہ فسوسناک ہے۔  آئے دن کے حادثات پر انکوائری ہونی چاہیے اور ملوث افراد کو سزا ملنی چاہیے۔  جہانگیر ترین سمیت تمام افراد کو انصاف ملنا چاہیئے۔ ان ہاؤس تبدیلی پیپلزپارٹی اور پی ڈی ایم کا مشترکہ بیانیہ تھا۔ نواز شریف سمیت تمام اپوزیشن کو انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ سیاسی انتقام کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ ٹرین حادثے کے ذمہ داروں کے خلاف کاروائی ہونی چائیے۔ پارلیمنٹ کے اندر تمام اپوزیشن جماعتیں متحد ہیں اگر بجٹ میں عوام کو ریلیف کا ملا تو حکومت کی مخالفت کریں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز پاکستان پیپلز پارٹی ملتان کے رہنماء نسیم لابر کے بھائی ملک ارشاد ر سول ایڈووکیٹ کی وفات پر اظہار تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا اس موقع پر انہوں نے مزیدکہاہے کہ  پہلے سو دن ہر حکومت کے لیے اہم ہوتے ہیں۔ ہم نے چارٹر آف ڈیموکریسی پر عمل شروع کیا۔ یہ موجودہ حکمران اپنے منشور پر عمل نہیں کر سکے۔ ان کا کہنا تھا کہ تین سال بعد سابقہ حکومتوں پر بھی ابھی ملبہ ڈالنا سمجھ سے بالاتر ہے ہے۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن تمام لیول پر ایک ہیں اور عوام دوست بجٹ نہ ہوا تو شدید مخالفت کریں گے   انہوں نے کہا کہ این ایف سی ایوارڈ پر عمل ہونا چاہئے لیکن جنوبی پنجاب کو کچھ نہیں ملا۔ بہت بجٹ دیکھے ہیں یہ گورکھ دھندہ ہوتے ہیں۔ عوام کے مسائل کے لئے اپوزیشن ایک ہی کوئی غلط فہمی میں نہ رہے رہے۔ ہمیں سیکرٹریٹ نہیں علیحدہ صوبہ چاہیے۔ حکومت علیحدہ صوبہ بنانا ہی نہیں چاہتی میں نے علیحدہ صوبے کے لیے بل پاس کرا لیا تھا تھا۔  ہمارے منصوبوں پر تختیاں لگائی جا رہی ہیں۔جہانگیر ترین کو بکا مال کہنے سے متعلق سوال پر انہوں نے کہا کہ سیاست دان عزت دار لوگ ہیں وہ عزت کے لئے سیاست کرتے ہیں کسی سیاست دان کو بکا مال کہنا نامناسب ہے جن کو حق نہیں ملے تو کیا وہ آواز نہیں اٹھائے گا۔ ملک کے حالات اس نہج پر پہنچ چکے ہیں کہ سیاسی استحکام ہی معاشی استحکام کیلئے ضروری ہے۔ میں کہنا چاہتا ہوں کہ پی ٹی آئی حکومت منشور پر عمل نہیں کر سکی اگر تین سال بعد بھی حکومت سابقہ حکومتوں کو ذمہ ٹھہرا رہی ہے تو یہ انکی ناکامی ہے۔ انہوں نے مزید کہا جنوبی پنجاب کو این ایف سی ایوارڈ کے تحت حصہ ملنا چاہیئے۔ بجلی کے نرخوں میں 200 فیصد اضافہ ہو چکا ہے۔ عوام کے مسائل کے لئے اپوزیشن تقسیم نہیں ایک ہے۔

یوسف رضا گیلانی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -