پشاور ہائیکورٹ نے آن لائن کلاسز میں انٹرنیٹ سروس کی معطلی کیخلاف درخواست پرنوٹس جاری

پشاور ہائیکورٹ نے آن لائن کلاسز میں انٹرنیٹ سروس کی معطلی کیخلاف درخواست ...

  

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاور ہائیکورٹ نے آن لائن کلاسز میں انٹرنیٹ سروس کی معطلی کے خلاف دائر درخواست پر پاکستان ٹیلی کمونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) اور موبائل کمپنیز کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا کیس کی  سماعت پشاور ہائیکورٹ کی جسٹس مسرت ہلالی اور جسٹس ناصر محفوظ پر مشتمل دو رکنی بنچ نے کی درخواست گزار نورعالم  خان   اورشبینہ نورایڈوکیٹس نے عدالت کو بتایا کہ کورونا وبا میں تعلیمی ادارے بند ہونے کے بعد مختلف یونیورسٹیز نے طلبا کے لئے آن لائن کلاسز شروع کیں مختلف وجوہات کی بنا پر اکثر موبائل انٹرنیٹ سروس معطل ہوجاتی ہے جس کی وجہ سے طلبا کی کلاسز متاثر ہورہی ہیں طلبا انٹرنیٹ پیکچ کرتے وقت ٹیکس بھی ادا کرتے ہیں لیکن ان کو بلاتعطل سروس نہیں  مل رہی ہے جس کی وجہ سے طلباء کی پڑھائی متاثر ہورہی ہے کورونا وباء میں طلبا کو آن لائن کلاسز کے لئے انٹرنیٹ سروس مہیا کرنا موبائل کمپنیز کی ذمہ داری ہے فاضل بنچ نے پی ٹی اے اور مختلف موبائل کمپنیز کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا عدالت نے سماعت 22 جون تک ملتوی کردی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -