عمرکوٹ کے 339 طالبعلموں میں سکالر شپ کے چیک تقسیم

عمرکوٹ کے 339 طالبعلموں میں سکالر شپ کے چیک تقسیم
عمرکوٹ کے 339 طالبعلموں میں سکالر شپ کے چیک تقسیم

  

عمرکوٹ(سید ریحان شبیر )عمرکوٹ ضلع کے ہونہار 339  طالب علموں میں حکومت سندھ کی اقلیتی معاملات کی صوبائی وزارت کی جانب سکالرشپ کے چیک تقسیم ۔ ایڈووکیٹ ہیرا لال میگھواڑ کمار ٹلوانی نے طلبہ میں سکالرشپ کے چیک تقسیم کرنے کی تقریب سےخطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سندھ اقلیتی طلبہ کی حوصلہ افزائی کےلیے اس قسم کے اقدامات اٹھاتی رہے گی ۔ 

تفصیلات کےمطابق عمرکوٹ میں حکومت سندھ کی اقلیتی معاملات کی صوبائی وزارت کی جانب سے ایک اشتہار کےذریعے سندھ کے ہونہار اقلیتی طلبہ سے سکالرشپ کےلیے درخواستیں طلب کی گئی تھیں جس کے بعد صوبائی وزیر ہری رام کشوری کے پولیٹکل سکرٹری ایڈوکیٹ ہیرا لال میگھواڑ اور کمار ٹلوانی نےضلع عمرکوٹ  کے "339"اقلیتی طلبہ میں یونیورسٹی کےطلبہ میں بیس ہزار روپے کے فی چیک جبکہ کالجز کے طلبہ میں پندرہ ہزار روپے کےحساب سے طلبہ میں چیک تقسیم کیےگئے ۔

اس موقع پر صوبائی وزیر کے پولیٹکل سکرٹری ایڈووکیٹ ہیرا لال میگھواڑ اور کمار ٹلوانی نے تقریب سے خطاب اور میڈیاسے   بات کرتےہوئے کہا کہ حکومت سندھ اقلیتی طلبہ کی حوصلہ افزائی کےلیے ہرممکن عملی اقدامات کررہی ہے، حکومت سندھ کےمحکمہ اقلیتی امور کی جانب صوبہ سندھ کےمختلف اضلاع ٹنڈہ الہیارمیرپورخاص،تھرپارکر،میں پہلے مرحلے میں چیک کیےگئے ہیں ۔ مجموعی طورپر سندھ سےاوپن میرٹ پر تقریباًدوہزار "2000"ہونہارطلبہ و طالبات میں سکالرشپ ایوارڈچیک تقسیم کیےگئے ۔

اس موقع پر وزیراعلیٰ سندھ کےمعاون خصوصی پونجومل کا کہناتھا کہ پیپلزپارٹی کی حکومت نے ہمیشہ اقلیتی عوام کے حقوق کا خیال رکھا ہے اور اقلیتی معاملات کےصوبائی ہری رام کشوری نے ہمیشہ غریب مستحق اقلیتی لوگوں کےلیے بھرپور کام کیا ہے ، اقلیتی معاملات کی صوبائی وزارت نے اقلیتی ہونہار مستحق طلبہ کی فنانشل سپورٹ ، میڈیکل سپورٹ اور طلبہ وطالبات میں میرٹ پر سکالرشپ کے فنڈز تقسیم کیےہیں ۔ تقریب سے جئے چوہان وینجھراج میگھواڑ اور پیپلزپارٹی کے مختلف رہنماؤں نےبھی خطاب کیا ۔

مزید :

علاقائی -سندھ -عمرکوٹ -