افغانستان میں بارودی سرنگیں ہٹانے والے مزدوروں پر حملہ، طالبان مدد کو پہنچ گئے، پھر کیا ہوا؟

افغانستان میں بارودی سرنگیں ہٹانے والے مزدوروں پر حملہ، طالبان مدد کو پہنچ ...
افغانستان میں بارودی سرنگیں ہٹانے والے مزدوروں پر حملہ، طالبان مدد کو پہنچ گئے، پھر کیا ہوا؟

  

کابل (ڈیلی پاکستان آن لائن) افغانستان میں بارودی سرنگیں ہٹانے والے این جی او ملازمین پر حملہ کرکے 10 افراد کو ہلاک اور 16 کو زخمی کردیا گیا۔ کابل انتظامیہ نے الزام طالبان پر عائد کیا ہے تاہم این  جی او حکام کا کہنا ہے کہ طالبان نے تو مزدوروں کی مدد کی اور حملہ آوروں کو ڈرا دھمکا کر وہاں سے بھگایا۔

افغان میڈیا کے مطابق صوبہ بغلان میں برطانوی این جی او ہالو ٹرسٹ کے کارکن ایک کھیت سے بارودی سرنگیں ہٹا کر واپس اپنی رہائش گاہ میں آئے اور آرام کیلئے کمروں میں چلے گئے۔ اسی دوران نامعلوم حملہ آور آئے اور مزدوروں کو بے رحمی سے قتل کرنا شروع کردیا۔ حملہ آوروں نے 10 افراد کو قتل اور 16 کو زخمی کیا ہے۔

کابل انتظامیہ کی جانب سے حملے کا الزام طالبان پر عائد کیا گیا تاہم طالبان نے اس کی تردید کی ہے اور کہا ہے کہ وہ ایسے لوگوں پر حملہ نہیں کرتے جو اپنے دفاع کی سکت نہ رکھتے ہوں۔

این جی او کے چیف ایگزیکٹو جیمز کراؤن نے بھی طالبان کے حق میں گواہی دی ہے اور کہا ہے کہ طالبان نے تو مزدوروں کی مدد کی اور موقع پر پہنچ کر حملہ آوروں کو ڈرا دھمکا کر وہاں سے بھگایا۔ جیمز کراؤن کے مطابق حملہ آوروں نے مزدوروں کے کمروں میں جا کر انہیں بستروں پر گولیوں سے بھون ڈالا۔ حملہ آوروں نے خصوصی طور پر ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے افراد کو نشانہ بنایا۔

مزید :

بین الاقوامی -