نشتر ہسپتال،پرچیز آفس سے  ریکارڈ غائب،سکیورٹی میں اضافہ

 نشتر ہسپتال،پرچیز آفس سے  ریکارڈ غائب،سکیورٹی میں اضافہ

  

ملتان (وقا ئع نگار) نشتر ہسپتال کے ایم  ایس نے پرچیز آفس (بقیہ نمبر30صفحہ6پر)

میں ریکارڈ کے غائب ہونے کے پیش نظر آفس کے گرد سکیورٹی پہرہ لگا دیا۔جہاں دن رات سکیورٹی گارڈ ڈیوٹی دے رہیں ہیں۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے نشتر ہسپتال کے شعبہ پرچیز میں تعینات ایڈھاک بنیادوں پر بھرتی ڈاکٹر وجہیہ کے بارے میں اس بات کا  انکشاف ہوا ہے۔کہ انہوں نے نشتر ہسپتال کے ایم ایس کو روزانہ کسی نا آکسی بہانے سے سابق ایم ایس اور خاتون فارماسسٹ کے خلاف بھڑکانے کا سلسلہ شروع کیا ہوا ہے۔ایک روز قبل بھی ڈاکٹر نے ایم ایس نشتر ہسپتال کو بتایا کہ خاتون فارماسسٹ اپنے شوہر کے ہمراہ  پرچیز آفس کے باہر آئی ہوئیں  ہیں۔اور وہاں سے اہم ریکارڈ حاصل کرنے کی کوشش میں ہیں جس پر نشتر ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر نبیل سلیم نے فوری طور پرچیز آفس کے باہر  سیکورٹی گارڈ کو پہنچنے کا  حکم دیا۔اور خود  تھوڑی دیر میں موقع پر آگئے۔مگر اس دوران وہاں کوئی بھی موجود نا تھا۔ایم ایس نے پرچیز آفس کے باہر مستقل بنیادوں پر  سیکورٹی کی ڈیوٹی لگانے کے احکامات جاری کیئے۔جو گزشتہ روز سے  پہرہ دے رہیں ہیں۔اور ہر آنے جانے والے افراد کے بارے میں افسران کو مطلع کر رہے ہیں۔ذرائع کے مطابق نشتر ہسپتال کے شعبہ پرچیز کے تالے توڑنے کے بارے میں افواہیں شوشل میڈیا پر وائرل ہوتی رہیں ہیں۔ 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -