جسٹس شوکت عزیز نے گستاخ بلاگرز کو دہشتگرد قرار دے کر حق کا پرچم بلند کیا،اشرف آصف

جسٹس شوکت عزیز نے گستاخ بلاگرز کو دہشتگرد قرار دے کر حق کا پرچم بلند کیا،اشرف ...

لاہور( وقائع نگار)تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ کے قائدین ڈاکٹر محمد اشرف آصف جلالی ،میاں محمدولید احمد شرقپوری،پیر سید محمد نویدالحسن مشہدی،صاحبزادہ محمد داود رضوی،میاں محمد تنویر نقشبندی،پیر سیدخرم ریاض رضوی، سید علی ذوالقرنین حسینی، علامہ محمد عبدالرشید اویسی،صاحبزادہ حامدرضا سیالکوٹی،علامہ مرتضی علی ہاشمی، مفتی محمدوقار مدنی نے اپنے مشترکہ بیان میں کہااسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے گستاخ بلاگرز کو دہشت گرد قرار دے کر حق کا پرچم بلند کیا ہے۔ ہم جسٹس صدیقی کے سوشل میڈیا کو گستاخانہ مواد سے پاک کرنے کے عزم کو سلام کرتے ہیں۔تحفظ ناموس رسالت کیلئے عدالتیں اپنا کردار ادا کریں۔اس میں کوئی شک نہیں توہین رسالت کرنے والاسب سے بڑا دہشت گردہے۔

کیونکہ جب زمین پر توہینِ رسالت کا ظلم ہو تو زمین کے پھٹ جانے کا خطرہ ہوتا ہے۔چنانچہ توہین رسالت سب سے بڑی دہشت گردی ہے۔انسانی حقوق کا سچا علمبردار کبھی بھی توہین رسالت کا مرتکب نہیں ہوسکتا۔سوشل میڈیا پر کنڑول نہ ہونے کی وجہ سے گستاخ کروڑ وں مسلمانوں کے جذبات پر حملہ کررہے ہیں۔ سائبر کرائمز بل قادیانیوں اور گستاخانہ پیجیز والوں کے سامنے بے بس اور خاموش ہے۔ پاکستان میں آئین اور قانون کی حکمرانی اسی صورت میں ثابت ہوسکتی ہے کہ گستاخوں کی روک تھام کی جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4