بھارت نے امن کا ہاتھ بڑھایا تو تھام لیں گے، مکا لہرایا تو توڑ دینگے: شاہ محمود قریشی

بھارت نے امن کا ہاتھ بڑھایا تو تھام لیں گے، مکا لہرایا تو توڑ دینگے: شاہ محمود ...

چھاچھرو(آئی این پی )وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ اگر مودی نے پاکستان کی طرف میلی آنکھ سے دیکھا تو ہمارے بیٹے اور بیٹیاں اپنے ملک اور نظریے کے دفاع کیلئے تیارہیں، عمران خان کا مقصد غربت کا خاتمہ کرنا ہے اور مودی کا مقصد الیکشن جیتنا ہے، پاکستان کی طرف سے امن کی صدا ہے اور بھارت طبل جنگ بجارہا ہے، اگر بھارت نے امن کا ہاتھ بڑھایا تو ہم تھام لیں گے، اگر دشمنی کا مکا لہرا تو دشمن کا مکا توڑ دیں گے،تھر میں اموات کی وجہ ہم خود ہیں، ہم ہر بار انہیں لوگوں کو ووٹ دیتے ہیں جو صحت کی سہولیات کے نام پر ڈرامہ کرتے ہیں،مودی سرکار گاندھی اور نہرو کے فلسفے کو دفن کر رہی ہے، کشمیری حق خود ارادیت مانگ رہے ہیں۔جمعہ کو صحت کارڈ تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ تھرپارکر کی عوام بھارت کے وزیراعظمکو پیغام دینے کیلئے تیار ہے، وزیراعظم نے اپنے منشور کے مطابق صحت کارڈ سکیم شروع کی، اللہ نے تھرپارکر کو نعمتوں سے نوازا ہے، یہاں کوئلہ ہے جو پورے پاکستان کو روشن کر سکتا ہے لیکن افسوس کہ یہ علاقہ اندھیروں میں ڈوبا ہوا ہے،امید ہے عمران خان کے دور میں تھرپارکر میں خوش گوار تبدیلی آئے گی، مودی کو کہتا ہوں کہ آج 1971کا نہیں بلکہ نیا پاکستان ہے،1971کا حکمران یحییٰ خان اور آج کا حکمران عمران خان ہے، میرامودی سرکار کو پیغام ہے کہ ہم جارحیت کے باوجود امن چاہتے ہیں لیکن بھارت کے سینے میں انتقام کی آگ چل رہی ہے، ہم نے بھارتی پائلٹ کو واپس کیا اور ہمیں شاکراللہ کی لاش دی گئی، عمران خان کی نظریں مغربی سرحدوں پر تھیں تا کہ افغانستان میں امن آئے، اس وقت مشرق کی طرف سے پاکستان پر مودی نے وار کرنے کی کوشش کی، اگر پاکستان کی طرف میلی آنکھ سے دیکھا تو تھرکا ایک ایک فرد جنگ کیلئے تیار ہے، عمران خان کا سیاسی فلسفہ محمد علی جناح اور ان کا تصور اقبال کا تصور ہے، سیکولر بھارت آج تعصب کی نذر ہو گیا ہے،عمران خان کی نذر غربت کو مٹانے اور مودی کی نذر الیکشن جیتنے پر ہے، ہماری طرف س امن کی ہوا ہے لیکن ہم کسی کاروائی کا بھرپور جواب دیں گے، آج بھارت کے اندر سے مودی کے خلاف آوازیں اٹھ رہی ہیں اور مقبوضہ کشمیر سے آزادی کی آوازیں بلند ہو رہی ہیں،بھارت نے امن کا ہاتھ بڑھایا تو ہاتھ تھام لیں گے لیکن جنگ کا مکا دکھایا تو اسے توڑ دیں گے

مزید : صفحہ اول /رائے