”میں چاہتا ہوں کہ یو اے ای میں اپنی ٹیم کیساتھ۔۔۔“ ٹیم سے باہر ہونے والے سرفراز احمد نے انتہائی حیران کن خواہش کا اظہار کر دیا، جان کر آپ بے اختیار کہہ اٹھیں گے کہ ”آخر ماجرا کیا ہے؟“

”میں چاہتا ہوں کہ یو اے ای میں اپنی ٹیم کیساتھ۔۔۔“ ٹیم سے باہر ہونے والے ...
”میں چاہتا ہوں کہ یو اے ای میں اپنی ٹیم کیساتھ۔۔۔“ ٹیم سے باہر ہونے والے سرفراز احمد نے انتہائی حیران کن خواہش کا اظہار کر دیا، جان کر آپ بے اختیار کہہ اٹھیں گے کہ ”آخر ماجرا کیا ہے؟“

  


کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) آسٹریلیا کیخلاف سیریز کیلئے ٹیم سے باہر ہونے والے سرفراز احمد نے خواہش ظاہر کی ہے کہ وہ کھلاڑیوں کی کارکردگی کو قریب سے دیکھنے کیلئے آسٹریلیا سے سیریز کے دوران قومی ٹیم کیساتھ متحدہ عرب امارات میں رہنا چاہتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے گزشتہ روز آسٹریلیا کیخلاف ون ڈے سیریز کیلئے 16 رکنی قومی سکواڈ کا اعلان کیا جس کے مطابق سرفراز احمد، فخر زمان، بابراعظم، شاداب خان، شاہین شاہ آفریدی کو آرام دیا گیا ہے اور قیادت کی ذمہ داری شعیب ملک کو سونپ دی گئی ہے۔

نجی ٹی وی جیو نیوز کے مطابق پی سی بی سرفراز احمد کو ملک میں رکھ کر آرام دینا چاہتا ہے کیونکہ شعیب ملک کے ساتھ مستقل کپتان کا ڈریسنگ روم میں بیٹھنا مسائل پیدا کرسکتا ہے لیکن اس سے متعلق حتمی فیصلے کے اختیار چیئرمین پی سی بی احسان مانی کے پاس ہے۔

قومی سلیکشن کمیٹی کے سربراہ انضمام الحق کا کہنا ہے کہ ہم نہیں چاہتے کہ جب کھلاڑی ورلڈ کپ کیلئے میدان میں اتریں تو وہ تھکاوٹ کا شکار ہوں۔چار سال بعد ہونے والے ورلڈ کپ کیلئے کھلاڑیوں کا ذہنی اور جسمانی طور پر ترو تازہ ہونا ضروری ہے اور جن کھلاڑیوں کو آرام دیا گیا ہے وہ سب پاکستان کے اہم اور میچ ونر کھلاڑی ہیں جبکہ جن 6 کھلاڑیوں کو ڈراپ کیا گیا ہے وہ ورلڈ کپ میں پاکستانی الیون کا آٹومیٹک سلیکشن ہوں گے۔

انضمام الحق نے کہا کہ اگر یہ کھلاڑی آٹومیٹک سلیکشن نہ ہوتے تو انہیں آرام دینے کا کوئی جواز نہیں تھا۔ پاکستانی کھلاڑی گزشتہ 6 ماہ سے مسلسل کرکٹ کھیل کر تھکاوٹ کا شکار ہورہے تھے اور ان کی کارکردگی متاثر ہو رہی تھی اس لئے ہم چاہتے ہیں کہ ورلڈکپ سے پہلے تمام کھلاڑی تازہ دم ہوں تاکہ وہ بھرپور کارکردگی دکھا سکیں۔

مزید : کھیل