انڈس ہائی وے پر خوفناک گڑھے‘ حادثات میں اضافہ‘ تعمیراتی کام ٹھپ 

انڈس ہائی وے پر خوفناک گڑھے‘ حادثات میں اضافہ‘ تعمیراتی کام ٹھپ 

  

راجن پور (ڈسٹر کٹ رپورٹر) راجن پور،کراچی سے پشاور جانے والی انڈس ہائی وے خوفناک گڑھوں میں تبدیل ہوگئی، ٹریفک حادثات میں قیمتی جانوں کاضیاع معمول بن گیا،حکومت نے انڈس ہائی وے کشمور تاٖڈیرہ غازی خان سکیشن تعمیر کااعلان کیا مگر ایک سال (بقیہ نمبر11صفحہ 6پر)

گذر نے کے باوجود تاحال اس اہم قومی شاہراہ کی تعمیر کا کام شروع نہ ہوسکا تفصیلات کے مطابق کرا چی سے پشاور جانے والی انڈس ہائی وے کشمور صوبہ سندھ سے ڈیرہ غازی خان ڈویژن تک مکمل طور پر ٹوٹ پھوٹ چکی ہے سڑک پر جگہ جگہ خوفناک گڑھے پڑے ہوئے ہیں اس سڑک پر ٹریفک حادثات روزکا معمول بن چکے ہیں کئی ہزار قیمتی جانیں گذشتہ دس سالوں میں ضائع ہوچکی ہیں اور ان حادثات کا شکار ہو کرکئی ہزار افراد جسمانی طور پر معذور ہوچکے ہیں اکثر مال بردار گاڑیاں بھی حادثات کاشکار ہوکر اُلٹ جاتی ہیں پی ٹی آئی حکومت نے گذشتہ سال این ایچ اے کواس کی تعمیر کیلئے ٹینڈرز کرا نے کا اعلان کیا تھا مگر ایک سال گذر گیاتاحال اس کی تعمیر کا کام شروع نہ ہوسکا ہے راجن پور سے مختلف شہروں روجہان، فاضل پور،جام پور اور ڈیرہ غازی خان سمیت دیگر کوجانے والوں کا آمدروفت میں شدید مشکلات کاسا منا کرنا پڑتا ہے اہلیان راجن پور نے وزیراعظم پاکستان عمران خان سے اس اہم قومی شاہراہ کی جلداز جلدتعمیر کاکام شروع کرانے کا مطا لبہ کیا ہے۔

ٹھپ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -