باتھ روم میں موبائل کا استعمال انتہائی خطرناک

باتھ روم میں موبائل کا استعمال انتہائی خطرناک
باتھ روم میں موبائل کا استعمال انتہائی خطرناک

  

ہملٹن (بیورورپورٹ ) باتھ روم میں فون ساتھ لے کر مت جائیں کیوں کہ ایسا کرنے سے آپ صحت کے مسائل سے دوچار ہو سکتے ہیں۔ حفظان صحت کے عالمی دن کے حوالے سے سینٹ جوزف ہیلتھ کیئر انفیکشن کنٹرول سنٹر میں ایک تقریب کا اہتمام کیا گیا، جس میں سنٹر کی مینجر اینی بیالاچوسکی نے سمارٹ فون اور ٹیبلیٹس پر اپنی تحقیق کے بارے میں شرکاءکو آگاہ کیا۔ بیالاچوسکی کا کہنا ہے کہ الیکٹرانکس کی اشیاءکا مختلف کیمیکلز اور سپرے کے پاس ہونا انسانی صحت کے لئے نقصان کا باعث بن سکتا ہے۔ قریب ہی موجود کیمیکلز باعث موبائل کی شعاعوں سے ایک خاص قسم کا بیکٹریا (E.coli) جنم لیتا ہے جو انسان کو فلو میں مبتلا کردیتا ہے، یہ مختلف امراض کی پرورش کا باعث بھی بن سکتا ہے، لہذا ہمیں اس بارے میں فکر مند ہونا چاہیے۔ بدقسمتی سے اس بارے میں تحقیقات کا دائرہ کار محدود ہے کہ ہمارے ہاتھ میں موجود آلات سے نکلنے والی شعاعیں ہمیں کتنا اور کس طرح نقصان پہنچا رہی ہیں۔ اینی مزید کہتی ہیں کہ برطانیہ میں ہونے والی ایک تحقیق کے مطابق یہاں ہر 6 میں سے ایک موبائل میں یہ بیکٹریا (E.coli) موجود ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس