پیٹ کی بیماری کا ناقابل یقین علاج

پیٹ کی بیماری کا ناقابل یقین علاج
پیٹ کی بیماری کا ناقابل یقین علاج

  

کینبرا (بیورورپورٹ ) آسٹریلوی ڈاکٹرز نے انسانی فضلہ کو معدے کے امراض کے علاج کے لئے استعمال کرنا شروع کر دیا۔ یہ علاج فضلہ کی منتقلی کے ذریعے معدہ میں بیکٹریل توازن برقرار رکھنے کے ساتھ کیڑوں کو بھی مات دیتا ہے۔ آسٹریلوی ایسوسی ایٹ پروفیسر این سیپلٹ کا کہنا ہے کہ اس طریقہ علاج میں ناک میں ایک ٹیوب ڈال کر انسانی فضلہ براہ راست معدے تک پہنچایا جاتا ہے۔ اس طریقہ علاج سے دائمی اسہال اور پیٹ درد کے امراض میں 95 فیصد تک کامیابی حاصل کی گئی ہے۔ آسٹریلیا کے 4ہزار سے زائد سینئر ڈاکٹرز کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے این نے مزید کہا کہ عام طور پر مریضوں کو بیماری کی صورت میں انتہائی مشکلات کا سامنا ہوتا ہے اور وہ کسی رشتہ دار کی طرف سے عطیہ حاصل کئے بغیر آگے نہیں بڑھ سکتے۔ صحت مند انسان کی غذائی نالی اور خلیات میں سو گنا زائد بیکٹریا ہوتے ہیں اور یہ بیکٹریا ہمیں زندہ رکھنے کے لئے نہایت ضروری ہیں، لیکن مسئلہ تب بنتا ہے جب انٹی بائیوٹک ان بیکٹریا کی کثیر تعداد کو مار دیتے ہیں۔ اس طریقہ علاج کا مقصد ایسے مریضوں میں مدافعتی حیاتیات کو بڑھانا ہے جوبہت زیادہ بیمار ہیں۔

مزید : تعلیم و صحت