گندا پانی پینے سے شہری مختلف خطرناک بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں،نصیر احمد

گندا پانی پینے سے شہری مختلف خطرناک بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں،نصیر احمد

لاہور( سپیشل رپورٹر ) پنجاب حکومت کی نااہلی سے شہری واسا کا گندا اور آرسینک وائرس زدہ پانی پینے پر مجبور ہیں جس کی وجہ سے شہریوں میں جلد ، کینسر ہیپاٹائٹس اور گردہ سمیت دیگر جان لیوا بیماریوں میں اضافہ ہوا ہے ، ان خیالات کا اظہار پیپلز پارٹی انسانی حقوق ونگ کے رہنماؤں نصیر احمد ، عمر حیات تبسم، توقیر اکرم ، رائے علی حسین ایڈووکیٹ، شبانہ اظہر چوہدری ، عبدالکریم میو نے مشترکہ بیان میں کیا انہوں نے کہا کہ پاکستان کونسل آف ریسرچ واٹر رسیورسز کے مطابق شہر کے تمام ٹیوب ویلوں میں15 %آر سینک موجود ہے جبکہ ریسرچ کے مطابق پانی فراہم کرنے والے ٹیوب ویلوں میں آرسینک کی تعداد صفر ہونی چاہیے ، انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ( ن) دوسری مرتبہ مسلسل اقتدار میں آچکی ہے لیکن اس نے ابھی تک صحت عامہ کے کسی میگا پراجیکٹ پر کام شروع نہیں کیا ہے، لاہور میں سیوریج کا نظام چالیس سال پرانا ہے پانی اور گٹروں کی لائٹس ٹوٹ پھوٹ کر آپس میں مل گئی ہیں جس کی وجہ سے شہری گندگی سے ملا پانی پینے پر مجبور ہیں انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ( ن) ذاتی مفادات پر مبنی پراجیکٹ تو دنو ں میں مکمل کر والیتی ہے لیکن زندہ رہنے کے لئے ضروری پانی جیسے مفاد عامہ کے منصوبوں پر عمل درآمد نہیں کرتی صرف لاہور میں چند مقامات پر فلٹریشن پلانٹ لگائے گئے ہیں وہ بھی بند پڑے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1