جلد کے کینسر کا پتہ لگانے کے لیے سافٹ ویئر تیار

جلد کے کینسر کا پتہ لگانے کے لیے سافٹ ویئر تیار
جلد کے کینسر کا پتہ لگانے کے لیے سافٹ ویئر تیار

  

نیویارک (نیوزڈیسک) خطرناک اور پیچیدہ بیماریوں کے علاج کا اہم ترین حصہ ان بیماریوں کی درست تشخیص ہے۔ جدید دور میں انسان ایسی ایسی بیماریوں کا شکار ہوچکا ہے کہ جن کو سمجھنا اور ان کا پتہ چلانا ایک دقیق عمل بن چکا ہے۔ مگر امریکہ کی ہیوسٹن یونیورسٹی کے پروفیسر جارج زوری ڈاکیس نے ایک ایسی ٹیکنالوجی ایجاد کرلی ہے کہ جو جلد کے کینسر جیسی موذی بیماری کا پتا چلالے گی دلچسپ بات یہ ہے کہ ایک سافٹ ویئر اور متعلقہ آلے پر مشتمل ڈرموسکرین نامی یہ ٹیکنالوجی عام ڈاکٹروں سے کہیں زیادہ درستی کے ساتھ جلد کے کینسر کی موجودگی کا پتا چلا سکتی ہے۔ ایک عام فیملی ڈاکٹر اس مرض کا پتا چلانے کی 50 سے 70 فیصد صلاحیت رکھتا ہے جبکہ یہ مخصوص سافٹ ویئر تقریباً 85 فیصد کینسر کا سراغ لگاسکتا ہے۔ ایک عدسے کے ذریعے جلد کا جائزہ لیا جاتا ہے اور اگر جلد میں کوئی خطرناک تبدیلیاں ہورہی ہوں جو کہ بظاہر نظر نہ آرہی ہوں تو ڈرموسکرین سافٹ ویئر آپ کو اس کے بارے میں درستی سے آگاہ کردے گا۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ اس ایپ کی مدد سے جلد کے کینسر کے ایسے مریضوں کو بہت فائدہ ہوگا کہ جن کی کسی ڈاکٹر تک رسائی باآسانی ممکن نہ ہو۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی