چین کا امریکہ تک ٹرین چلانے کا منصوبہ

چین کا امریکہ تک ٹرین چلانے کا منصوبہ
چین کا امریکہ تک ٹرین چلانے کا منصوبہ

  

بیجنگ (نیوزڈیسک) پاکستان میں ریلوے کی قریب المرگ حالت کو دیکھ کر لگتا ہے کہ سفر کا یہ ذریعہ شاید اب پاکستانیوں کیلئے ماضی کی بات بن کر رہ جائے گا لیکن دنیا کے جدید ممالک میں سفر کا یہ ذریعہ دن دگنی رات چوگنی ترقی کررہا ہے۔ اب چین نے ایک ایسے ریلوے منصوبےکی تجویز پیش کی ہے جو  ریل سے سفر کو نئی بلندیوں تک لے جائے گا۔ چین 8 ہزار میل لمبی ریلوے لائن کی تعمیر کا ارادہ رکھتا ہے  جو اس ملک کو امریکہ سے ملا دے گی اور یہ ریل اتنی تیز رفتار ہوگی کہ اس حیرت انگیز حد تک لمبے سفر کو دو دن سے بھی کم وقت میں طے کرے گی۔ تجویز کردہ پلان کے مطابق 217 میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنے والی یہ جدید ترین ریل چین کے شمال مشرقی علاقے سے روانہ ہوگی اور سائبیریا سے ہوتی ہوئی آبنائے بیرنگ کے نیچے سے 125 میل کے سفر سمندر کے گہرے پانیوں کے نیچے طے کرے گی۔ اس زیر آب سرنگ کے ذریعے روس اور امریکہ کا علاقہ الاسکا مل جائیں گے۔ سرنگ سے گزرنے کے بعد یہ ریل کینیڈا سے ہوتی ہوئی امریکہ پہنچے گی۔ ماہرین کا خیال ہے کہ اس ریل کی تعمیر سے ہوائی سفر کا ایک بہترین متبادل میسر آجائے گا۔

مزید : بزنس