وہ مشورے جن پر آپ عمل کرلیں تو کبھی بھی کپڑے ڈرائی کلین کروانے یا بازار سے دھلوانے کی ضرورت نہیں پڑے گی

وہ مشورے جن پر آپ عمل کرلیں تو کبھی بھی کپڑے ڈرائی کلین کروانے یا بازار سے ...
وہ مشورے جن پر آپ عمل کرلیں تو کبھی بھی کپڑے ڈرائی کلین کروانے یا بازار سے دھلوانے کی ضرورت نہیں پڑے گی

  

لندن(نیوزڈیسک) ہم اپنے مہنگے کپڑوں کو دھونے کی بجائے ڈرائی کلین کرواتے ہیں جس میں ہر ماہ کثیر رقم خرچ ہوجاتی ہے ،آئیے آپ کو چند ایسے مشورے دیں جن پر عمل کرکے آپ کو اپنے کپڑے ڈرائی کلینر کے پاس بھیجنے کی ضرورت ہی پیش نہیں آئے گی۔

*ڈرائی کلینر کے پاس کپڑے بھیجنے کا ایک مقصد انہیں سنگڑے سے بچانا ہے،اگر آپ کے کپڑے وول(اون)کے ہیں تو انہیں ہرگز گرم پانی میں نہ دھوئیں کیونکہ اس طرح وہ سنگڑ جائیں گے لہذا ان کی دھلائی کے لئے ٹھنڈے پانی کا استعمال کریں۔

*اپنے سویٹروں کو ہمیشہ ٹھنڈے پانی سے دھائیں اور دھونے کے بعد انہیں لٹکانے کی بجائے زمین پر رکھ کر سکھائیں۔لٹکانے سے ان کی شکل خراب ہوجائے گی،کوشش کریں کہ انہیں ہاتھ سے دھویا جائے۔

*کپڑوں کو سنگڑنے سے بچانے کے لئے انہیں ٹھنڈے پانی سے دھوئیں اور گرم پانی کا استعمال نہ کریں۔

*اپنی ٹی شرٹس اور رنگین کپڑوںکو کبھی بھی تیز دھوپ میں نہ لٹکائیں کہ اس طرح ان کا رنگ خراب ہوجائے گا لہذا انہیں سائے میں سوکھائیں۔

*اگر آپ چاہتے ہیں کہ جینز کی خوبصورتی اور شیپ دیر تک برقرار رہے تو اسے کمرے کے درجہ حرارت پر کسی اچھے ڈیٹرجنٹ سے دھوئیں۔پانی میں ڈیٹرجنٹ ڈالنے کے بعد جینز کو اس میں پانچ منٹ تک بھگونے کے بعد پانی میں سے گزاریں تاکہ صابن نکل جائے۔اس کے بعد انہیں کسی سائی دار جگہ پر سوکھالیں۔

*اپنے کاٹن کے کپڑوں کو دھونے کے لئے انہیں الٹا کر دھائیں اور انہیں بھی احتیاط کے ساتھ ٹھنڈے پانی سے دھوئیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس