کروڑوں کی کرپشن،سابق چیئرمین پبلک سروس کمیشن بلوچستان گرفتار

کروڑوں کی کرپشن،سابق چیئرمین پبلک سروس کمیشن بلوچستان گرفتار
کروڑوں کی کرپشن،سابق چیئرمین پبلک سروس کمیشن بلوچستان گرفتار

  

کوئٹہ (مانیٹرنگ ڈیسک )بلوچستان میں نیب کی کارروائیوں میں شدت آگئی،سابق چیئرمین بلوچستان پبلک سروس کمیشن اشرف مگسی کو بھی گرفتا ر کر لیا گیا۔

نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق نیب نے بلوچستان میں اپنی کارروائیوں میں مزید تیزی لاتے ہوئے بلوچستان پبلک سروس کمیشن کے سابق چیئرمین اشرف مگسی کو گرفتار کرلیا ہے۔مگسی پر الزام ہے کہ انہوں نے دوران ملازمت اختیارات کا ناجائز استعمال کیا اور کروڑوں روپے لے کر من پسند افراد کو ملازمتوں سے نوازا۔اوردوران سروس مختلف مدات میں کروڑوں روپے کی کرپشن کی۔

رپورٹ کے مطابق گرفتاریوںسے متعلق گرفتاری کے کئی گھنٹوں بعد بتایا جا رہا ہے ،امکان ہے کہ کئی مزید افراد زیرحراست ہیں جن کے بارے میں وقت گزرنے کے بعد ہی بتایا جا ئے گا۔جب کہ نیب کی کارروائیوں سے معلوم ہوتا ہے کہ مزید کئی اراد کو حراست میں لیئے جانے کا امکان ہے۔

خیال رہے کہ نیب بلوچستان نے گزشتہ روز سیکرٹری خزانہ مشتاق رئیسنی کے گھر پر چھاپہ مار کر 63کروڑ روپے،15ہزار پاﺅنڈ ،ہزاروں ڈالرز اور 4کلو سونا برآمد کر کے انہیں گرفتار کیا تھا ۔بعدازاں مشتاق نے اعتراف کیا کہ یہ رقم کرپشن سے حاصل کی گئی۔

مزید : کوئٹہ /اہم خبریں