نثار احمد چوہدری کا امریکہ میں غیر قانونی طور پرپاکستان کیلئے کام کرنے کا اعتراف

نثار احمد چوہدری کا امریکہ میں غیر قانونی طور پرپاکستان کیلئے کام کرنے کا ...

واشنگٹن (اظہر زمان، بیورو چیف) ایک پاکستانی امریکن نثار احمد چوہدری نے امریکہ میں غیر قانونی طور پر حکومت پاکستان کیلئے کام کرنے کا اعتراف کر لیا ہے۔ وفاقی محکمہ انصاف نے ایک بیان میں بتایا ہے انہوں نے اپنے آپ کو غیر ملکی ایجنٹ کے طور پر رجسٹر نہیں کرایا اور اس طر ح غیر قانونی طور پر پاکستانی حکومت کیلئے کام کرتے رہے۔ محکمہ انصاف کے مطابق ملزم نے اپنے اعترافی بیان میں بتایا ہے وہ ان رابطوں کے ذریعے امریکی حکومت کی پاکستان سے متعلق پالیسیوں کے بارے میں معلومات اکھٹی کرتے تھے جن کا مقصد موجودہ اور سابق امریکی حکام اور ماہرین کی آراء پر اثر انداز ہونا تھا۔ 71 سالہ نثار احمد چوہدری واشنگٹن کے نواحی شہر کولمبیا میں رہائش پذیر ہیں جنھوں نے پاکستانی امریکن لیگ کے نام سے تنظیم بھی قائم کر رکھی ہے۔ یاد رہے امریکی قانون کے مطابق ضروری ہے کسی بھی غیر ملکی حکومت کے نمائندے کے طور پر کام کرنیوالے افراد یا انجمنوں کیلئے قانونی پابندی ہے وہ خود کو اٹارنی جنرل کے دفتر میں بطور غیر ملکی ایجنٹ رجسٹر کرائیں جبکہ نثار چوہدر ی نے اپنے آپ کو رجسٹر نہیں کرایا۔ اعلامیہ کے مطابق نثار چوہدری واشنگٹن ڈی سی میں واقعے پاکستانی سفارتخانے اور نیو یارک کے قو نصل خانے سے مسلسل رابطے میں تھے اور مختلف امریکی ٹھنک ٹیکنس سے اپنے رابطوں کی تفصیل سے حکومت پاکستان کے نمائندوں کو آگاہ کرتے تھے۔ ملزم نے مبینہ طور پر اپنی خدمات کے بدلے میں اپنے رشتہ داروں اور ساتھیوں کو پاکستان میں سرکاری ملازمتیں دلوائیں اور فوائد حاصل کئے ملزم کیخلاف مقدمے کی سماعت کرنیوالے میری لینڈ ریاست کی جج ڈیبرا نے سزا سنانے کیلئے 30 جولائی کی تاریخ مقرر کی ہے۔ اعتراف جرم کرنے پر ملزم کو زیادہ سے زیادہ پانچ سال قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

مزید : علاقائی