نوجوان نسل انتہا پسندی کو مسترد ، گمراہ عناصر سے بچے ، آئینی حدود میں رہنا ، قانون کی پاسداری یقینی بنانا ہم سب کی ذمہ داری : جنرل باجوہ

نوجوان نسل انتہا پسندی کو مسترد ، گمراہ عناصر سے بچے ، آئینی حدود میں رہنا ، ...

کوئٹہ (بیورورپورٹ ، مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز ایجنسیاں) چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے قانون کی پاسداری یقینی بنانا ہر کسی کیلئے ضروری ہے، پاک فوج اپنی آئینی ذمہ داریاں پوری کرتے ہوئے ملک کا دفاع کرے گی،سیف سٹی پراجیکٹ سے کوئٹہ میں امن وامان کی صورتحال میں مزید بہتر ی آئیگی،پاک فوج بلوچستان میں تعلیم ، صحت ، بجلی ، پانی کی فراہمی کے حکومتی اقدامات کی حمایت کرتی ہے ، نہیں چاہتے بلوچستان کسی مخصو ص کوٹے یا پیکیج کی مرہون منت ہو،چند عناصر نوجوان نسل کے ذہنوں پر اثرانداز ہو کر انتشار پھیلانا چاہتے ہیں، نوجوان نسل محنت اور کر د ا ر سازی سے ملکی ترقی میں کردار ادا کرے۔منگل کو آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے پاک افغان سرحد پر بلوچستان پنچ پائی کے مقام پر آہنی باڑ کے کام کا افتتاح کیا۔ اس موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے قبائلی عمائدین اور مقامی افراد سے گفتگو بھی کی اور آہنی باڑ کی تنصیب میں تعاون وحمایت پر قبائلی عمائدین کا شکریہ اداکیا۔ آرمی چیف کا مزید کہنا تھا پاک افغان بارڈر پر باڑ سے دہشت گردوں کی نقل وحرکت پر نظر رکھی جاسکے گی۔ آئی ایس پی آر کے مطابق قانونی نقل وحرکت کیلئے مخصو ص کراسنگ پوائنٹ رکھے گئے ہیں جبکہ دو طرفہ اقتصادی سرگرمیوں سے متعلق بھی خصوصی انتظامات کئے گئے ہیں۔ آرمی چیف نے سیکیورٹی صورتحال برقرار رکھنے میں قبائلی عمائدین کا شکریہ ادا کیا۔ آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کوئٹہ سیف سٹی پرا جیکٹ کا بھی افتتاح کیاجو گزشتہ پانچ سال سے رکا ہوا تھا ،آئی ایس پی آر کے مطابق سیف سٹی پراجیکٹ سے کوئٹہ مزید محفوظ ہوگا، شہرمیں امن وامان کی صورتحال میں مزید بہتری آئیگی۔ آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے کوئٹہ میں مختلف یونیورسٹیوں کے طلبہ سے بھی ملاقات کی اس موقع پر بات چیت کرتے ہوئے آرمی چیف کا کہنا تھا پاک فوج بلوچستان میں تعلیم ، صحت ، بجلی ، پانی کی فرا ہمی کے حکومتی اقدامات کی حمایت کرتی ہے، ہم نہیں چاہتے بلوچستان کسی مخصوص کوٹے یا پیکیج کی مرہون منت ہو، آر می چیف جنرل قمر جا و ید باجوہ نے وزیراعلیٰ بلوچستان کے خوشحال بلوچستان کیلئے مل کر کام کرنے پر پاک فوج اور ایف سی کا شکریہ ادا کیا ۔ آرمی چیف نے کہا ہر کسی کیلئے ضروری ہے کہ وہ قانون کی پاسداری یقینی بنائے، پاک فوج اپنی آئینی ذمہ داریاں پوری کرتے ہوئے ملک کا دفاع کرے گی، آئینی حدود میں رہتے ہوئے قوانین پر عملدرآمد یقینی بنانا سب کی ذمہ داری ہے۔آرمی چیف نے نوجوان نسل پرزور دیا کہ وہ محنت اور کردار سازی سے ملکی ترقی میں کردار ادا کرے، پاکستان نے دہشت گردی کو مسترد کردیا ہے۔مسلح افواج اور عوام کی قربانیوں کے باعث ملک میں دیرپا امن قائم ہوا، چند عناصر نوجوان نسل کے ذہنوں پر اثرانداز ہو کر انتشار پھیلانا چاہتے ہیں۔آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے کوئٹہ میں نسٹ کے کیمپس کا سنگ بنیاد بھی رکھا،جس پر دو ارب 63 کروڑ روپے لاگت آئیگی۔نجی ٹی وی نے آئی ایس پی آر کے حوالے سے بتایا کہ آرمی چیف نے سوشل میڈیا کے ذریعے نوجوانوں کو ہدف بنانے پر نظر رکھنے کی ہدایت کی جبکہ تصادم اور نفرت کی طرف لے جانیوالوں سے بچنے کو کہا، آرمی چیف نے کہا انتہاء پسندی کو اجتماعی طور پر مسترد کیا جائے۔

جنرل باجوہ

مزید : صفحہ اول