افتتاح سے قبل خانیوال ‘ لودھراں ‘ بائی پاس راجباہ اصطبل پل زمین بوس

افتتاح سے قبل خانیوال ‘ لودھراں ‘ بائی پاس راجباہ اصطبل پل زمین بوس

خانیوال (نمائندہ پاکستان) 26 ارب کی لاگت سے تیار ہونے والے 98 کلو میٹر طویل خانیوال لودھراں ایکسپریس منصوبے کو کرپشن کی نظر کھا گئی ۔ خانیوال پل اصطبل کے نزدیک راج گاہ پل 5 کروڑ کی لاگت سے تعمیر ہوا ۔ تاہم جیسے ہی ٹرائل لینے کے لیے تعمیراتی کمپنی کی بھاری مشینری گزاری گئی پل پہلے ہی جھٹکے میں زمین بوس ہو گیا۔ ذارئع کے مطابق ڈرائیو ر شدید زخمی ہو گیا ۔ جو ایک نجی(بقیہ نمبر32صفحہ7پر )

ادارے میں زیر علاج ہے ۔ ذرائع نے بتایا 5 کروڑ کی مالیت سے تعمیر ہونے والے پل کی کمزور بنیادیں رکھیں گئیں ۔ جبکہ پل کی تعمیر میں ریت سیمنٹ ، بجری کی مطلوبہ معیار کو نظر انداز کیا گیا ۔ جبکہ سریہ بھی زنگ الودہ استعمال کیاگیا ۔ اینٹیں بھی سب سے ہلکی کوالٹی کی لگائی گئیں جس کے بعد پل میں دراڑیں پڑ گئیں ۔ ذرائع نے بتایا توجہ دلانے کے باوجود محکمہ ہائی وے کے افسران اور متعلقہ تعمیراتی کمپنی نے کوئی نوٹس نہیں لیا ۔ ذرائع کے مطابق یہی حال تمام پلوں کا ہے ۔ مطلوبہ ٹینڈرکے مطابق کوئی پل تعمیر نہیں ہوا ۔ پلو ں کی ڈائڈنگ کرنے والے انجینئر اناڑی جبکہ تعمیراتی منصوبے کی نگرانی کرنے والے کرپٹ افسران ثابت ہوئے ۔ذرائع کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب کے 14 مئی کو ہونے والے دورہ پر خانیوال ہائی وے ایکسپریس کا افتتاح بھی شیڈول کا حصہ ہے ۔ یہی وجہ ہے کہ دوبارہ ڈھڑا ڈھڑ رات کی تاریکی میں کام جاری ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر