متحدہ مجلس عمل ملتان کے انتخابات تنازعات کا شکار ہوگئے

متحدہ مجلس عمل ملتان کے انتخابات تنازعات کا شکار ہوگئے

ملتان (سٹی رپورٹر)متحدہ مجلس عمل ملتان کے انتخابات اختلافات کا شکار ہو گئے ناراض دھڑے نے علیحدہ گروپ بنانے کے لئے مشاورت شروع کر دی ہے جماعت اسلامی کی جانب سے متحدہ مجلس عمل کے اراکین کے اعزاز میں دےئے گئے عشائیے میں جمعیت علماء پاکستان کے کسی بھی رکن(بقیہ نمبر10صفحہ12پر )

نے شرکت نہیں کی ضلع ملتان میں انتخابات کے حوالے سے ہونے والے اختلافات کے باعث ملتان ڈویژن کے کئے اضلاع میں بھی ایم ایم اے کے انتخابات تعطل کا شکار ہو گئے ہیں بتایا جاتا ہے کہ متحدہ مجلس عمل ملتان کے ہونے والے انتخابات میں جمعیت علماء پاکستان نے صدارت یا جنرل سکیریٹری کے لئے اپنے عہدیدار کا نام دیا تھا جسے مسترد کر دیا گیا جس پر جمعیت علما ء پاکستان کے عہدیداروں نے بائیکات کر دیا تھالیکن اس کے پروا کئے بغیر جماعت اسلامی ضلع ملتان کے امیر آصف محمود اخوانی کو امیر اور جمعیت علماء اسلام کے امیر حافظ محمد عمر شیخ کو ایم ایم اے کاجنرل سیکریٹری بنا دیا گیا جس پر جمعیت علماء پاکستان کے عہدیداروں نے ناراضگی کا اظہار کیا اور احتجاجً جماعت اسلامی کی جانب سے ایم ایم اے کے اعزاز میں دئیے عشائیہ میں شرکت نہیں کی بتایا جاتا ہے کہ مرکزی جمعیت اہلحدیث ، جمعیت علما ء اسلام، (ف) ، شیعہ علماء کونسل، کے اپنے اپنے نظم سے ناراض گروپو ں نے بھی حال ہی بننے والے والے ایم ایم اے کے انتخابات کو چلینج کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے اس سلسلے میں انہوں نے ایم ایم اے علیحدہ سے گروپ بنانے کی بھی مشاورت شروع کر دی ہے جس میں فیصلہ کیا جائے گاکہ 13مئی کو متحدہ مجلس عمل کے زیر اہتمام لاہور میں منعقد ہونے والے جلسہ میں شرکت کرنے یا نہ کرنے کے حوالے سے بھی فیصلہ کیا جائے گا واضع رہے کہ ماضی میں متحدہ مجلس عمل کی ملتان میں صدارت اور جماعت اسلامی کے پاس جنرل سیکریٹری کا عہدہ تھا ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر