اسکول آف لیڈرشپ کا17ویں ینگ لیڈرز کانفرنس کا اعلان

اسکول آف لیڈرشپ کا17ویں ینگ لیڈرز کانفرنس کا اعلان

کراچی (پ ر) گزشتہ روز موون پک ہوٹل میں منعقد عالیشان ایونٹ میں اسکول آف لیڈرشپ نے اس سال کی ینگ لیڈرز کانفرنس(YLC) کا انعقاد کیا جس کے ساتھ ہی اس کانفرنس کے 17 سال مکمل ہو جائیں گے جہاں اس کا بنیادی مقصد نوجوان کو مستقبل کے مواقع سے جوڑ کر ان کی زندگیوں کو تبدیل کرنا ہے۔ینگ لیڈرز کانفرنس کے سربراہ اظہر حمزہ نے تقریب میں اعلان کرتے ہوئے اس سال کے یوتھ لیڈرشپ ایونٹ کے موضوع کا اعلان کیا۔اظہر نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ اس سال ہم نے جو موضوع(Theme) منتخب کیا ہے وہ ’’IT'S TIME‘‘ ہے(یہی وقت ہے)۔ یہی وقت ہے کہ ہم ملک کے لیے توانائیاں صرف کریں، اپنے سوچ کے افق کو وسیع کریں، سوالات اٹھائیں اور انا کو بالائے طاق رکھ کر ایک ہو جائیں اور اس ملک کی باگ ڈور اپنے ہاتھ میں لے کر اس کا رخ بدل دیں۔ینگ لیڈرز 6 دن اور 5 راتوں پر محیط ایک ہے جس میں شہری اور دیہی علاقوں سے تعلق رکھنے والے 300 بہترین لیڈرز کو ایک ساتھ رہ کر ایونٹ میں موجود 50 بہترین کاروباری، سماجی، سیاسی اور فنی رہنماؤں عقل و دانش اور حکمت سے سیکھنے کا موقع ملے گا۔ ینگ لیڈرز کانفرنس2018 جدت اور تخلیقی کام کے اتحاد کا مظہر ہو گی جو شرکا کو مستقبل کے مواقعوں کو دیکھنے کا موقع فراہم کرے گی اور کانفرنس کے بعد منعقد ہونے والے سماجی کاموں کے منصوبے سماجی ذمے داریوں کے احساس کو بھی اجاگر کریں گے۔ اسکول آف لیڈرشپ اس پلیٹ فارم پر جمع ہونے والے نوجوانوں کی تربیت اور انہیں سہولیات کی فراہمی کیلئے پرعزم ہے۔اسکول آف لیڈرشپ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر جنوب حماد سعید نے میڈیا سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی 19 کروڑ آبادی کا 60فیصد 30 سال سے کم عمر نوجوانوں پر مشتمل ہے لہٰذا ترقی کے بہترین مواقع موجود ہیں۔ ہمارے لیے چیلنج ان نوجوانوں کو درست مہارت، اقدار اور وسائل سے لیس کرنا ہے جو ان کے مقاصد کے حصول کو یقینی بنا سکے اور یہ بہترین صلاحیت کے مطابق کارکردگی کا مظاہرہ کر سکیں۔ یہ ایک بہترین کام ہے لیکن یہ وہ کام ہے جو اسکول آف لیڈرشپ گزشتہ 16 سال سے ینگ لیڈرز کانفرنس میں انجام دیتے ہوئے فخر محسوس کر رہا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر