اسلام آباد ہائی کورٹ کے دبنگ اور دو ٹوک اعلان نے مسلمانوں میں خوشی کی لہر دوڑا دی

اسلام آباد ہائی کورٹ کے دبنگ اور دو ٹوک اعلان نے مسلمانوں میں خوشی کی لہر ...
اسلام آباد ہائی کورٹ کے دبنگ اور دو ٹوک اعلان نے مسلمانوں میں خوشی کی لہر دوڑا دی

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستانی ٹی چینلز پر اگلے ہفتے سے شروع ہونے والی خصوصی رمضان ٹرانسمیشنز کے پروموز آنا شروع ہوچکے تھے، انہیں دیکھ کر اندازہ لگانا مشکل نہیں تھا کہ ٹی وی  چینلز نے انہیں ہر طریقے سے پرکشش اور ’کمرشل‘ بنانے کی تمام تیاریاں مکمل کرلی ہیں  کیونکہ ماہ رمضان کے آغاز کے ساتھ ہی ٹی وی چینلز پر خصوصی نشریات کا آغاز ہو جاتا ہے، زیادہ اشتہارات لینے اورناظرین کو متوجہ کرنے کی دوڑ میں ٹی وی چینلز ایک دوسرے پر سبقت لے جانے کی کوشش میں ایسی اوٹ پٹانگ حرکتیں کرتے ہیں کہ اللہ کی پناہ ! لیکن بھلا ہو اسلام آباد ہائی کورٹ کا جس کے معزز جسٹس شوکت عزیز صدیقی نےدو ٹوک الفاظ میں  واضح کیا ہے  کہ اِس رمضان میں کسی چینل پر کوئی نیلام گھر اور سرکس نہیں ہوگا، ایسا کچھ نشر ہوا تو پابندی لگا دیں گے، عدالت نے ہر چینل کیلئے پانچ وقت کی اذان نشر کرنا لازم قرار دے دیا ہے ۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔۔۔

مزید : وڈیو گیلری