بچے کو جنم دینا کتنا مشکل اور تکلیف دہ عمل ہوتا ہے؟ ماﺅں نے ایسی بات بتادی کہ سن کر ہی مردوں کی چیخیں نکل جائیں گی

بچے کو جنم دینا کتنا مشکل اور تکلیف دہ عمل ہوتا ہے؟ ماﺅں نے ایسی بات بتادی کہ ...
بچے کو جنم دینا کتنا مشکل اور تکلیف دہ عمل ہوتا ہے؟ ماﺅں نے ایسی بات بتادی کہ سن کر ہی مردوں کی چیخیں نکل جائیں گی

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) دردِ زہ کی شدت ایسی ہے کہ کسی بھی خاتون کے لیے زچگی کا وقت وقت جاں کنی کے لمحات کے مترادف ہوتا ہے۔اب پہلی بار خواتین نے انٹرنیٹ پر اس درد کی نوعیت کے متعلق ایسے حقائق بیان کر دیئے ہیں کہ سن کر آدمی دہل جائے۔

یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

میل آن لائن کے مطابق خواتین کی ویب سائٹ Mumsnetپر ایک خاتون نے دیگر سے سوال پوچھا کہ ”میری ایک دوست بچے کو جنم دینے جا رہی ہے، وہ مجھ سے اکثر پوچھتی ہے کہ دردِ زہ کیسا ہوتا ہے؟ میں اگرچہ دو بچوں کو جنم دے چکی ہوں لیکن اس درد کو بیان کرنا میرے بس میں نہیں، آپ میں سے کوئی بتا سکتی ہے کہ یہ درد کیسا محسوس ہوتا ہے؟“

اس خاتون کو جواب دیتے ہوئے دیگر خواتین نے دردِ زہ کی کچھ اس طرح وضاحت کی کہ سن کر اس خاتون کی سہیلی بچے کو جنم دینے سے ہی خوفزدہ ہو جائے گی۔ ایک خاتون نے کہا کہ ”دردِ زہ اتنا شدید ہوتا ہے جیسے کسی کو کچل کر موت کے گھاٹ اتارا جا رہا ہو۔“ ایک اور خاتون نے لکھا کہ ”ہر کسی کی زندگی میں کبھی نہ کبھی ایسا لمحہ آتا ہے جب وہ خیال کرتا ہے کہ اس سے تو موت بہتر ہے۔ زچگی کا مرحلہ بھی ایسا ہی تکلیف دہ ہوتا ہے کہ خاتون اس کی تکلیف کے دوران موت کو ترجیح دینے لگتی ہے۔“مورین نامی ایک خاتون صارف نے جواب دیتے ہوئے لکھا کہ ”ڈاکٹر کہتے ہیں کہ زچگی کا درد بغیر نشہ دیئے انسانی جسم کا کوئی عضو کاٹنے کی تکلیف کے برابر ہوتا ہے۔ بہتر ہے کہ آپ اس کی شدت کے متعلق اپنی سہیلی کو مت بتائیں، ورنہ وہ خوفزدہ ہو جائے گی اور اس کے لیے یہ مرحلہ مزید مشکل ہو جائے گا۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس