خود کش حملے کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے‘امیر العظیم

 خود کش حملے کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے‘امیر العظیم

لاہور (نمائندہ خصوصی) جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل اور امیر جماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب امیر العظیم نے لاہور میں ایلیٹ فورس کی گاڑی پر خو د کش حملے میں شہید ہونے والے افراد کے لواحقین کے ساتھ اظہار تعزیت کرتے ہوئے اس واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ دہشت گردی کے واقعے کی مکمل تحقیقات کی جائیں اور اصل ذمہ داران کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔انہوں نے کہا کہ دھماکے میں 3 اہلکاروں سمیت 10افرا کی شہادت قومی سانحہ ہے۔ پوری قوم دہشت گردی کے خلاف سیکورٹی فورسز کی پشت پرکھڑی ہے۔

 انھوں نے کہا کہ چند دن قبل لاہور میں دہشت گردوں کے داخلے کی خبریں میڈیا میں آئیں تھیں مگر حکومت کی جانب سے سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا گیا۔اگر اس وقت دہشت گردوں کو گرفتار کر لیا جاتا تو آج دہشت گردی کا سانحہ نہ ہو تا۔ نام نہاد دہشت گردی کے خلاف لڑی جانے والی امریکی جنگ میں سب سے زیادہ نقصان پاکستان کا ہوا ہے۔ 78ہزار پاکستانیوں سمیت سیکورٹی فورسز کی بڑی تعداد اس امریکی مفاداتی جنگ کا نشانہ بنی ہے۔ اب وقت آگیا ہے کہ معصوم جانوں سے کھیلنے والوں کی پشت پناہی کرنے والوں کو بے نقاب کیا جائے اور حکومت اپنی خارجہ و داخلہ پالیسیوں کو از سر نو تشکیل دے۔ جنرل(ر) پرویز مشرف کی بزدلانہ پالیسیوں کا خمیازہ پوری قوم بھگت رہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان میں ہونے والی دہشت گردی میں بیرونی ہاتھ کو خارج از امکان قرار نہیں دیاجاسکتا۔ بھارت، امریکہ اور اسرائیل کی مدد سے پاکستان میں ہونے والی دہشت گردی کی وارداتوں میں براہ راست ملوث ہے، جس کا ثبوت کلبھوشن اور ریمنڈ ڈیوس نیٹ ورک کی صورت میں سامنے آچکا ہے۔ جب تک را، موساد اور سی آئی اے کے گٹھ جوڑ کو توڑا نہیں جاتا اس وقت تک پاکستان میں ہونے والی دہشت گردی پر مکمل قابو نہیں پایا جاسکتا۔ امیرالعظیم نے مزید کہا کہ پاکستان قوم ایک بہادر قوم ہے جس نے دہشت گردی کے خلاف لڑی جانے والی اس جنگ میں روز اول سے قربانیاں دیں ہیں۔ دہشت گردوں کے مذموم عزائم کو خاک میں ملانے کے لیے ہم متحد ہیں۔ دشمن کبھی اپنے گھناؤنے ہتھکنڈوں اور سازشوں میں کامیاب نہیں ہوں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1