حکومت اور اپوزیشن کو حوصلے سے ایک دوسرے کی بات سننی چاہیے، شاہ محمود

حکومت اور اپوزیشن کو حوصلے سے ایک دوسرے کی بات سننی چاہیے، شاہ محمود

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ حکومت اور اپوزیشن کو حوصلے سے ایک دوسرے کی بات سننی چاہیے،ایوان میں بات نہ کرنے دینا اور مداخلت کرنا جمہوری سوچ کے منافی ہے،قبائلی اضلاع کی سیٹیں بڑھانے کے بل پر اپوزیشن سے مشاورت کریں گے۔ بدھ کو وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے پارلیمانی پارٹی کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ چاہتے ہیں کہ اپوزیشن کے ساتھ حدود و قیود طے کیے جائیں۔انہوں نے کہاکہ یہ مناسب نہیں کہ اپوزیشن اپنی بات تو کر دے لیکن حکومت کی نہ سنے۔انہوں نے کہاکہ حکومت اور اپوزیشن کو حوصلے سے ایک دوسرے کی بات سننی چاہیے،ایوان میں بات نہ کرنے دینا اور مداخلت کرنا جمہوری سوچ کے منافی ہے۔ انہوں نے کہاکہ قبائلی اضلاع کی سیٹیں بڑھانے کے بل پر اپوزیشن سے مشاورت کریں گے۔انہوں نے کہاکہ پنجاب کے نئے بلدیاتی نظام کو لوگوں نے سراہا۔انہوں نے کہاکہ پنجاب کا نیا بلدیاتی نظام صحیح معنوں میں مالیاتی اور انتظامی معاملات کی نچلی سطح تک منتقلی یقینی بنائے گا۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب کا سالانہ ایک تہائی ترقیاتی بجٹ بلدیاتی اداروں کو دیا جائے گا۔انہوں نے کہاکہ اختیارات کو نچلی سطح تک پہنچانے کے لیے عملی اقدام کیا گیا ہے۔

شاہ محمود

مزید : صفحہ اول