محکمہ آبپاشی کے ایکسیئن نے خود کو الاٹ کوٹھی 50ہزار ماہانہ کرائے پر دیدی 

محکمہ آبپاشی کے ایکسیئن نے خود کو الاٹ کوٹھی 50ہزار ماہانہ کرائے پر دیدی 

لاہور(ارشد محمود گھمن /سپیشل رپورٹر)محکمہ آبپاشی میں 4سال سے پرکشش سیٹ پرتعینات ایکسیئن راشد منہاس نے سرکاری کوٹھی کو50ہزار روپے ماہانہ کرایہ پر دے کرکمائی کاذریہ بنالیا۔ مذکورہ ایکسیئن نے چار سال قبل اری گیشن کالونی دھرم پورہ میں واقع کوٹھی نمبر11، اپنے نام الاٹ کرواکر اسے اپنے ہی محکمہ کے ریٹائر ہونے والے سیکشن آفیسر محسن کو کرایہ پر دے کر گزشتہ4سال سے 24لاکھ روپے وصول کرلئے ہیں۔ذرائع کے مطابق محکمہ آبپاشی (سی بی ڈی سی) ڈویژن لاہور کے ایکسئین راشد منہاس نے مبینہ طور پر سرکاری کوٹھی اپنے نام الاٹ کراکر کرایہ پر چڑھا دی ہے اور گزشتہ 4سال سے ایک کنال کے رقبہ پر محیط کوٹھی کا کرایہ وصول کرکے اسے کمائی کا ذریعہ بنارکھاہے جبکہ وہ خود ای ایم ای ہاؤسنگ سوسائٹی میں اپنی ذاتی 3کروڑ روپے مالیت کی کوٹھی میں رہائش پذیر ہے،محکمہ کے بعض اعلیٰ افسر بھی اس بات سے آگاہ ہیں مگر انہوں نے بھی راشد منہاس کے خلاف کارروائی نہ کرکے اس معاملے پر خاموشی اختیار کررکھی ہے، ذرائع نے مزید بتایا کہ ایکسیئن راشد منہاس کا والد کئی سال تک سیکرٹری اری گیشن پنجاب کا پرائیویٹ کلرک تعینات رہا، جس کی وجہ سے محکمہ کے افسر اس کے خلاف کسی بھی قسم کی کارروائی سے گریز کرتے ہیں، ذرائع نے مزید بتایا کہ ایکسیئن راشد منہاس نے سی بی ڈی سی لاہور ڈویژن میں گزشتہ 4سال کے دوران ترقیاتی منصوبوں کی آڑ میں کروڑوں روپے کی کرپشن کرکے قومی خزانے کو نقصان پہنچایا ہے جبکہ اس نے پنجاب اری گیشن سیکرٹریٹ میں لفٹ کی تنصیب میں بھی لاکھوں روپے ہڑپ کئے اور ایسی غیر معیاری لفٹ نصب کیں جو آئے روز خراب رہتی ہیں، ذرائع نے مزید بتایا کہ محکمہ اینٹی کرپشن ریجن لاہور نے بھی تحقیقات کا دائرہ وسیع کررکھاہے، اس حوالے سے مذکورہ ایکسیئن کا کہنا ہے کہ کروڑوں روپے مالیت کے اثاثے مجھے اپنی وراثت سے منتقل ہوئے ہیں، محکمہ سے کرپشن کرکے کوئی جائیداد نہیں بنائی، کرایہ پر دی جانے والی کوٹھی کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ کوٹھی کرایہ پر نہیں بلکہ دوستی کی بنا پر رہائش کے لئے دے رکھی ہے۔

سرکاری افسر

مزید : صفحہ آخر