آنکھوں کے عطیہ کے لئے عوام میں آگاہی بڑھانے کی ضرورت، صدر مملکت

آنکھوں کے عطیہ کے لئے عوام میں آگاہی بڑھانے کی ضرورت، صدر مملکت

اسلام آباد (آئی این پی)صدرپاکستان عارف علوی نے الشفاء ٹرسٹ آئی ہاسپٹل میں ملک کے پہلے آئی بینک کے افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک میں دو کروڑ افراد نابینا ہیں جن میں سے دو لاکھ کی بصارت کو قرنیہ کے آپریشن کی مدد سے بحال کیا جا سکتا ہے۔ الشفاء ٹرسٹ سالانہ قرنیہ کے آٹھ سو ٹرانسپلانٹ کر رہا ہے مگر ملک میں آنکھوں کے عطیہ کا رواج نہ ہونے کی وجہ سے بہت سے لوگ بینائی کی نعمت سے محروم رہ جاتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ الشفاء ٹرسٹ کی جانب سے جدید ترین سہولیات سے مزین آئی بینک کا قیام حوصلہ افزاء ہے جس میں انھیں امریکہ کے ایور سائیٹ آئی بینک کا تعاون حاصل رہا ہے۔انھوں نے کہا کہ آنکھوں کے عطیہ کے لئے عوام میں آگاہی بڑھانے کی ضرورت ہے تاکہ ملک میں نابینا افراد کی تعداد کم کی جا سکے اور انھیں معاشرے کا کارآمد شہری بنایا جا سکے۔ انھوں نے کہا کہ اس ٹرسٹ کی جانب سے ملک کے بڑے شہروں میں ایسے مزید آئی بینک قائم کرنے کا فیصلہ خوش آئند ہے۔ انھوں نے ٹرسٹ کے بانی جنرل جہانداد خان مرحوم، موجودہ صدر جنرل حامد جاویداور اسکے سٹاف کی خدمات کو بھرپور خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ یہ ادارہ انسانیت کی خدمت میں مصروف ہے۔ اس موقع پر الشفاء ٹرسٹ کے صدر جنرل حامد جاوید نے کہا کہ گزشتہ اٹھائیس سال میں ایک عام ہسپتال کو عالمی شہرت یافتہ ہسپتال بنا دیا گیا ہے جس کا معیار عالمی ادارہ صحت سے تصدیق شدہ ہے۔انھوں نے کہا کہ سالانہ دس لاکھ مریضوں کا علاج کیا جا رہا ہے جس میں سے ستر فیصد کا علاج بلا معاوضہ کیا جاتا ہے۔ بچے ہمارا مستقبل ہیں اس لئے انھیں خصوصی توجہ دی جا رہی ہے اور سالانہ تین لاکھ بچوں کی آنکھوں کا معائنہ کیا جاتا ہے۔

صدر مملکت

مزید : پشاورصفحہ آخر /علاقائی