عام آدمی کو ریلیف کی فراہمی کیلئے ہر ممکن کوششیں کرنا ہوں گی: وزیراعظم

عام آدمی کو ریلیف کی فراہمی کیلئے ہر ممکن کوششیں کرنا ہوں گی: وزیراعظم

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ تمام کوششیں عام آدمی کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے ہونی چاہئیں،مختلف شعبوں کو دی جانے والی سبسڈی کے عمل کی کڑی نگرانی کی ضرورت ہے،موجودہ اقتصادی چیلنجز سے نمٹنے کیلئے‘آؤٹ آف دی باکس’حل نکالنے ہوں گے۔ وزیرِاعظم عمران خان کے زیرصدارت کورونا وائرس کے معاشی اثرات سے متعلق جائزہ اجلاس ہوا، جس میں وزارت خزانہ کی جانب سے رواں مالی سال کے پہلے 9 ماہ میں معاشی اعشاریوں اور کورونا وائرس کے معیشت پر پڑنے والے اثرات پر بریفنگ دی گئی، جبکہ حکومت کی جانب سے ساڑھے 1200 ارب روپے اعلان کردہ معاشی پیکیج پر عملدرآمد کا بھی جائزہ لیا گیا۔کورونا وائرس کی صورتحال کے دوران اقتصادی ریلیف فراہم کرنے پر وزارت خزانہ کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مختلف شعبوں کو دی جانے والی سبسڈی کے عمل کی کڑی نگرانی کی ضرورت ہے، موجودہ اقتصادی چیلنجز سے نمٹنے کیلئے‘آؤٹ آف دی باکس’حل نکالنے ہوں گے، حکومت کی تمام کوششیں عام آدمی کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے ہونی چاہئیں۔انہوں نے کہاکہ چھوٹے کاروبار اور زراعت کے شعبے پر زیادہ توجہ دینے کی ضرورت ہے، چھوٹے کاروبار اور زرعی شعبے کو نوکریاں پیدا کرنے کے قابل بنایا جائے، پی ایس ڈی پی میں منصوبوں کے آغاز سے زیادہ بروقت تکمیل پر توجہ دی جائے، ترقیاتی منصوبوں میں پبلک پرائیوٹ پارٹنرشپ ماڈل اپنانے کی ضرورت ہے۔بعدازاں وزیرِ اعظم عمران خان سے وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی چودھری فواد احمد نے ملاقات،وزیرِ سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے کورونا وائرس کے حوالے سے پاکستان میں تیار کی جانے والی مصنوعات ماسک، حفاظتی لباس و دیگر مصنوعات کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔وزیر اعظم نے میڈ ان پاکستان منصوبے، کورونا وائرس سے متعلقہ مصنوعات کی تیاری و دیگر اقدامات پر وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی اور وزارت کی کارکردگی کو سراہا۔وزارتِ سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے بائیوٹیکنالوجی پارک کے قیام اور زرعی آلات کی تیاری جیسے منصوبوں پر بھی تبادلہ خیال کیاگیا۔

وزیراعظم عمران خان

مزید :

صفحہ اول -