عوام نے تعاون نہ کیا تو دوبارہ لاک ڈاؤن کرنا پڑیگا: شبلی فراز

  عوام نے تعاون نہ کیا تو دوبارہ لاک ڈاؤن کرنا پڑیگا: شبلی فراز

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر شبلی فراز نے کہا ہے کہ لاک ڈاؤن کھولنے کی کامیابی میں عوام کا تعاون درکار ہے،طویل لاک ڈاؤن چھوٹے کاروبار کو ہمیشہ کیلئے ٹھپ کردیتاہے۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں شبلی فراز نے کہا کہ ہمیں عوام کی صحت کی حفاظت اور معاشی روا نی کو ساتھ لے کر چلنا ہے۔لاک ڈاؤن میں مرحلہ وار نرمی کا فیصلہ پسے ہوئے کمزور طبقات کیلئے جذبہ احساس کا مظہر ہے۔ اس سے چھوٹے کاروباری افراد کے کاروبار کو سہارا ملے گا۔ طویل المعیاد لاک ڈاؤن چھوٹے کاروبار کرنے والو ں کے روزگار کو ہمیشہ کیلئے ٹھپ کردیتا۔وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن کھولنے کی کامیابی میں عوام کا تعاون درکار ہے۔ کاروباری شعبو ں کیلئے بنائے گئے ایس او پیز پر سختی سے عمل کرنا ہوگا۔ احتیاط نہ کی گئی تو دوبارہ لاک ڈاؤن کی طرف جانا پڑے گا۔ کورونا مشترکہ قومی مسئلہ ہے، ہمیں متحد ہو کر مقابلہ کرنا ہے۔وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز سے جاپان کے سفیر کو نینورومٹسودا نے ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی کے امور سمیت دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔جمعہ کو ہونیوالی ملاقات میں کووڈ19 کی موجودہ صورتحال اور لاک ڈاؤن کے حوالے سے گفتگو کی گئی۔ سینیٹر شبلی فراز نے کہا پاکستان جاپان کیساتھ تعلقات کو انتہائی قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے،جاپا ن نے آزمائش کی گھڑی میں ہمیشہ پاکستان کا ساتھ دیا۔ وفاقی وزیر نے جاپانی سفیر کو لاک ڈاؤن میں مرحلہ وار نرمی کے فیصلے کے حوالے سے آگاہ کیا اور بتایا ملک میں لاک ڈاؤن لگانے کیساتھ ساتھ ضرورت مندوں اور غرباء کی بہبود پر بھرپور توجہ دی۔ فیئر میڈیکل جاپان 35 ملین روپے کی میڈیکل امداد اور بین الاقوامی جاپانی این جی او (کے این کے)کی مانسہرہ کے مستحق خاندانوں کیلئے ایمرجنسی سپورٹ پر وزیر اطلاعات نے جاپانی سفیر کا شکریہ ادا کیا۔سینیٹر شبلی فراز نے کہا کورونا کیخلاف جاری جنگ میں حکومت ِ جاپان کی جانب سے 2.16ملین ڈالر امداد کا خیر مقدم کرتے ہیں۔ ملاقات میں ٹیکنالوجی کے مختلف شعبوں میں مزید تعاون پر تبادلہ خیال سمیت پی ٹی وی اور ریڈیو پاکستان کی اپ گریڈ یشن کے حوالے سے بات چیت کی گئی۔ سینیٹر شبلی فراز نے کہاہے کہ کورونا وائرس کی صورتحال کے بارے میں کہا کہ لاک ڈان میں نرمی کے وزیراعظم عمران خان کے اعلان کا مقصد دیہاڑی دار محنت کش طبقے کو ریلیف فراہم کرنا ہے،وزیراعظم عمران خان نے مزدوروں جو معاشی بندیشوں سے پریشان ہیں ان کیلئے لاک ڈاؤن کو مرحلہ وار کھولنے کا اعلان کیا، ہمیں کرونا وائرس کیساتھ ساتھ بھوک و افلاس کے خطرے کا بھی سامنا ہے،لاک ڈاؤن میں نرمی توازن پیدا کرنے کیلئے ضروری تھی۔عوام سے اپیل کی کہ وہ لاک ڈان میں نرمی کے دوران سخت احتیاطی تدابیر اپنائے اور سماجی فاصلہ برقرار رکھیں۔ وہ جمعہ کو پاکستان براڈکاسٹنگ کارپوریشن ہیڈکوارٹر کے دورہ اور اس کے ایک پروگرام میں اظہار خیال کررہے تھے۔ سینیٹرشبلی فراز نے پاکستان براڈکاسٹنگ کارپوریشن ہیڈکوارٹر کا دورہ کیا،اس موقع پر وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ ریڈیو پاکستان کی عظمت رفتہ بحال کرنے کیلئے اسے جدید خطوط پر استوار کیا جائے گا۔ریڈیو پاکستان رائے عامہ اور قومی ہم آہنگی کا انتہائی موثر ذریعہ ہے۔کورونا وائرس کی صورتحال میں ریڈیو کا کردار انتہائی اہمیت کا حامل ہے کیونکہ اس کی رسائی ملک کے کونے کونے میں ہے۔وفاقی وزیر نے ریڈیو پاکستان کے نیوز پروگرام اور آرکائیو سمیت مختلف شعبوں کا دورہ کیا اور کام کا جائزہ لیا۔پی بی سی کی ڈائریکٹر جنرل عمبرین جان نے انہیں ریڈیو پاکستان کے مختلف شعبوں کے طریقہ کار اور کارکردگی کے بارے میں بریفنگ دی۔اس موقع پر پاکستان براڈ کاسٹنگ کارپوریشن کے موجودہ ٹرانس میٹرز کی ڈیجیٹلائزیشن اور اپ گریڈیشن کا بھی جائزہ لیا گیا۔وفاقی وزیر نے سیکرٹری اطلاعات کو ہدایت کی کہ وہ پہلے مرحلے میں موجودہ سو اور چار سو کلو واٹ کے AM ٹرانس میٹرز کو ڈی آر ایم پر منتقل کرنے کے عمل کو تیز کریں۔وزیر اطلاعات نے ریڈیو پاکستان کے صوت القرآن چینل کی بھی تعریف کی۔وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز نے ریڈیو پاکستان کے خبروں اور حالات حاضرہ کے چینل سے خصوصی گفتگو بھی کی۔شبلی فراز نے کہا کہریڈیو پاکستان سے ان کی خصوصی وابستگی ہے کیونکہ میرے والد احمد فراز نے اسی ادارے سے اپنے کیئریر کا آغاز کیا تھا۔

شبلی فراز

مزید :

صفحہ اول -