محکمہ بلدیات سندھ کی سائیکوسوشل ہیلپ لائن امید کی روشن کرن بن گئی

  محکمہ بلدیات سندھ کی سائیکوسوشل ہیلپ لائن امید کی روشن کرن بن گئی

  

کراچی(سٹا ف رپورٹر)محکمہ بلدیات حکومت سندھ کی سائیکو سوشل ہیلپ لائن 1093کارونا سے متاثرہ مریضوں اور قرنطینہ میں موجود افراد کے لئے امید اور زندگی کی نئی کرن ثابت ہورہی ہے۔خصوصی گفتگو میں سیکرٹری بلدیات سندھ روشن علی شیخ نے بتایا کہ روزانہ کی بنیاد پر کم و بیش پچاس افراد سائیکو سوشل سپورٹ ہیلپ لائن کے ذریعے استفادہ حاصل کررہے ہیں اور کارونا کے شکار مریضوں، ڈپریشن اور دیگر نفسیاتی عوارض سے متاثرہ لوگوں کو فری کاوئنسلنگ سروس کے ذریعے مہلک وبا سے نبٹنے اور زندگی کی جانب دوبارہ لوٹنے میں مدد فراہم کی جارہی ہے۔ روشن علی شیخ کے مطابق سائیکو سوشل سپورٹ ہیلپ لائن پر خدمات فراہم کرنے والے ماہرین نفسیات اور رضاکاروں کا تربیت یافتہ پینل ہفتے کے ساتوں دن اپنی خدمات سر انجام دے رہا ہے اور کاوئنسلنگ سیشنز کے نہایت حوصلہ افزا نتائج بر آمد ہورہے ہیں۔ اس ہی سلسلے کے تحت گزشتہ دنوں کراچی کے ایکسپو سینٹر میں قائم قرنطینہ مرکز میں بھی آن لائن کاوئنسلنگ سیشن کا اہتمام کیا گیا تھا جس میں ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل اسٹاف کی ٹریننگ کا حصہ بھی شامل تھا۔ ٹیلی کانفرنس کے ذریعے منعقد کئے جانے والے آن لائن سیشن سے قرنطینہ مرکز میں موجود تمام مریضوں نے بھرپور انداز سے فائدہ اٹھایا اور اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے مریضوں کا کہنا تھا کہ محکمہ بلدیات سندھ سائیکو سوشل سپورٹ کی جانب سے منعقد کردہ آن لائن کاوئنسلنگ سیشن نہایت ہی مفید اور اثر بخش تھا جس میں ڈاکٹرز اور ماہرین نفسیات کی سیر حاصل گفتگونے ان پر خوشگوار اور صحت مند زندگی سے متعلق کئی نئے پہلو آشکار کئے ہیں۔ اس حوالے سے بات کرتے ہوئے ایک مریض عامر(فرضی نام) نے بتایا کہ جب اس کو یہ پتہ چلا کہ وہ کارونا کا مریض ہے تو اس کو یہ محسوس ہونے لگا کہ اب وہ بچ نہیں پائے گا۔ مایوسی نے اس کو قدر گھیر لیا تھا کہ وہ ہر دم موت کا منتظر رہنے گا، مگر قرنطینہ مرکز میں جانے کے بعد ڈاکٹرز اور ماہرین نفسیات کی خصوصی توجہ اور شب وروز کی کاوشوں نے اس کو دوبارہ سے زندگی سے پیار کرنا سکھا دیا ہے اور اب وہ پر امید ہے کہ جلد دوبارہ سے نارمل زندگی کی جانب لوٹ آئے گا۔ مزید براں سیکرٹری بلدیات سندھ نے سائیکو سوشل سپورٹ ہیلپ پر کام کرنے والے رضاکاروں سے گفتگو میں کارونا کے خلاف جدوجہد میں ان کے کردار کو سراہتے ہوئے ان کا حوصلہ بڑھایا اور انسانیت کو بچانے کے مشن میں بہترین کردار ادا کرنے پر ان کا شکریہ بھی ادا کیا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -