تنزانیہ پلٹ 11سالہ بچہ کرونا کا شکار‘ نشتر میں علاج معالجہ شروع

  تنزانیہ پلٹ 11سالہ بچہ کرونا کا شکار‘ نشتر میں علاج معالجہ شروع

  

ملتان(نمائندہ خصوصی)حکومت کی ناقص پالیسی،تنزانیہ پلٹ لاہور کا شہری اذیت کا شکار،11 سالہ بیٹے کو کورونا (بقیہ نمبر15صفحہ6پر)

پازیٹیو ڈکلئیر کر کے نشتر ہسپتال بھجوا دیا گیا،ساتھ سفر کر کے آنے والے والد کا 5 روز گزرنے کے باوجود ٹیسٹ نہ کیا جا سکا،11 سالہ بیٹا نشتر ہسپتال وارڈ میں رونے لگا،تفصیل کے مطابق لاہور کا رہائشی قیصر اعوان اپنے 11 سالہ بیٹے آلیان اعوان کے ہمراہ 5 مئی کی صبح تنزانیہ براستہ عمان ملتان ائرپورٹ پہنچا جہاں سکریننگ کے بعد باپ بیٹا کو نشتر ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں 11 سالہ بیٹے آلیان کو داخل کر کے نمونے حاصل کئے گئے رپورٹ ملنے پر 11 سالہ آلیان اعوان میں کورونا کی تصدیق ہو گئی جبکہ والد قیصر اعوان کو کہا گہا کہ ان کے ٹیسٹ کے نمونے انکے ہوٹل سے لئے جائیں گے اس حوالے سے رابطہ کرنے پر قیصر اعوان نے بتایا کہ انکا 11 سالہ بیٹا نشتر ہسپتال میں پوری رات روتا رہتا ہے،یہ کیسی عجیب پالیسی ہے کہ باہر ملک پھنسے ہوئے پاکستانیوں کو واپس وطن میں لا کر ذلیل کیا جا رہا ہے،بیٹے کا ٹیسٹ کیا گیا جبکہ 5 روز گزر گئے کئی بار احتجاج کیا لیکن میرا کورونا کا ٹیسٹ نہیں کیا جا رہا،جبکہ لاہور کا رہائشی ہونے کے باوجود ملتان میں زبردستی رکھا ہوا ہے،اعلی حکام سے اپیل ہے خدارا بیٹا باالکل صحت مند ہے اس کو کم از کم میرے ساتھ ہوٹل میں رکھا جائے یا پھر ہمیں گھر جانے کی اجازت دی جائے۔

علاج معالجہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -