کورونا وائرس کی وجہ سے HIV جیسی سنگین بیماری کے خاتمے کا امکان پیدا ہوگیا

کورونا وائرس کی وجہ سے HIV جیسی سنگین بیماری کے خاتمے کا امکان پیدا ہوگیا
کورونا وائرس کی وجہ سے HIV جیسی سنگین بیماری کے خاتمے کا امکان پیدا ہوگیا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) شر سے خیر برآمد ہونے کے مصداق کورونا وائرس کی وباءکے باعث ایچ آئی وی اور ایڈز کے پھیلاﺅ میں تاریخی کمی واقع ہونے کی خبر آ گئی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق لندن سیکسوئل ہیلتھ کلینک کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ لاک ڈاﺅن کی وجہ سے مردوخواتین میں جنسی تعلق کی شرح بہت کم ہو گئی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ایچ آئی وی کے پھیلاﺅ میں بھی ایسی کمی واقع ہوئی ہے جو غالباً ایک نسل میں ایک بار میسر آنے والا موقع ہے اور یہ بہترین وقت ہے کہ لوگ اپنے ایچ آئی وی کے ٹیسٹ کروائیں۔

کلینک کے ڈاکٹروں کی طرف سے جاری کیے گئے ایک آن لائن بیان میں کہا گیا ہے کہ لوگوں کو ٹیسٹ کے لیے کسی کلینک پر جانے کی ضرورت نہیں۔ وہ گھر بیٹھے ٹیسٹ کٹ آن لائن آرڈر کر سکتے ہیں اور اپنا ٹیسٹ کر سکتے ہیں۔ ہمیں اس نسل میں یہ واحد موقع ہاتھ آیا ہے جس سے فائدہ اٹھاتے ہوئے ہم ایچ آئی وی کے کیسز کی تعداد کم سے کم کر سکتے ہیں۔ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ جب کسی شخص کو ایچ آئی وی لاحق ہوتا ہے تو اس کے فوری بعدکچھ عرصے تک وہ سب سے زیادہ دوسروں کو یہ بیماری منتقل کرتا ہے۔ اب چونکہ لاک ڈاﺅن کی وجہ سے لوگوں کے جنسی تعلق قائم کرنے کی شرح بہت گر چکی ہے، لہٰذا ایچ آئی وی نئے لوگوں میں منتقل ہونے کے امکانات بھی بہت کم رہ گئے ہیں لہٰذا ہمیں اس سے فائدہ اٹھانا چاہیے۔

مزید :

تعلیم و صحت -