گیلانی نے ا ہم مقدمات کی تفتیش سے ہٹانے کےلئے رحمان ملک کو ٹاسک دیا ، ظفر قریشی

گیلانی نے ا ہم مقدمات کی تفتیش سے ہٹانے کےلئے رحمان ملک کو ٹاسک دیا ، ظفر ...

لاہور(وقائع نگار خصوصی) ایف آئی اے کے سابق ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل ظفر قریشی نے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے انہیں اہم مقدمات کی تفتیشوں سے ہٹانے کے لئے رحمان ملک کو ٹاسک دیا تھا اور دو سابق ڈی جی ایف آئی اے وسیم احمد اور ملک اقبال نے ان پر دباﺅ ڈالا تھا کہ وہ ان کیسوں کی تفتیش سے دستبردار ہوجائیں اور ان کے خلاف باقاعدہ ایک مہم بھی چلائی گئی تھی اور انہیں جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دی گئیں مگر خدا کے بعد انہیں چیف جسٹس آف پاکستان افتخار احمد چودھری نے بچایا،ظفر قریشی نے کہا کہ انہوںنے کسی چیز کی پروا نہیں کی اور کئی اہم سکینڈلز کے ملزموں کے خلاف کارروائی کرکے ملک کے لوٹے ہوئے کروڑوں روپے واپس خزانے میں جمع کروائے انہوں نے کہا کہ انہیں صوبہ بدر بھی کرنے کی کوشش کی گئی اور ان کے ساتھ تفتیش کرنے والوں کو صوبہ بدر کربھی دیاگیا ،انہوںنے کہا کہ زندگی اور موت اللہ کے اختیار میں ہے انہوں نے اپنے سرکاری فرائض میں کوئی کوتاہی نہیں کی، اور اللہ کی آس پر اپنی تفتیشیں جاری رکھیں انہوں نے کہا کہ میں اللہ کے سوا کسی کی پروا نہیں کرتا اور میں نے جو اس کے اصل ملزم تھے اُن کو بے نقاب کیا تاہم اس دوران کچھ لوگ بیرون ملک فرار ہوئے تو میں نے اُس وقت کے وزیرِ داخلہ رحمان ملک اور ڈی جی ایف آئی اے سے کئی بار کہا کہ ان ملزموں کو بیرون ملک سے لایا جائے مگر اس پر کوئی توجہ نہ دی گئی۔

مزید : صفحہ آخر