فرانزک آلات کی خریداری و تربیت کیلئے نیب اور آئی این ایل پی کے مابین معاہدہ

فرانزک آلات کی خریداری و تربیت کیلئے نیب اور آئی این ایل پی کے مابین معاہدہ

ملتان(نمائندہ خصوصی) محکمہ برائے بین لاقوامی انسداد منشیات و نفاذ قانون پاکستان (آئی این ایل 150 پی) کی ڈائریکٹر کیٹ سٹانن نے محکمہ انسداد بدعنوانی (نیب)کے ساتھ ایک معاہدہ پر (بقیہ نمبر21صفحہ12پر )

دستخط کئے جس کے تحت فرانزک آلات کی خریداری اور تریبت کیلئے ایک لاکھ پچیس ہزار ڈالر کی اعانت فراہم کی جائی گے جس سے نیب کے اہلکاروں کی تفتیش ، دستاویزی چھان بین کے حوالے سے استعداد کار میں اضافہ اور نیب کے پاکستان میں کرپشن کے خاتمے کے حوالے سے مشن کو ممکن بنایا جا سکے گا۔ قائم مقام چیئرمین نیب محمد امتیاز تاجور اورنیب کی سینئر قیادت نے تعاون کیلئے آئی این ایل کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ موجودہ اور مستقبل میں اعانت کے منصوبوں سے کرپشن کے خاتمے کے لیے نیب کی استعداد کار میں بہتری آئے گی۔نیب پاکستان میں انسداد بدعنوانی کا سب سے بڑا ادارہ ہے جس کا مقصد تین نکاتی طریقہ کار (آگاہی،روک تھام اور نفاذ) پر عمل پیر ا ہو کر ملک میں کرپشن کا خاتمہ کرنا ہے۔معاہدے پر دستخط کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیٹ سٹانا نے ملک میں انسداد بد عنوانی کے لیے نیب کی آگاہی، روک تھام اور نفاذ کی حکمت عملی کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن کے خلاف جنگ امریکہ کی دنیا بھر میں اولین ترجیحات میں شامل ہے اور محکمہ برائے بین لاقوامی انسداد منشیات و نفاذ قانون کا مقصد موثر غیر ملکی اعانت کی فراہمی اور عالمی تعاون کوفروغ دے کر بین الاقوامی جرائم اور غیر قانونی منشیات کے امریکہ اور اس کے شہریوں پر اثرات کو کم کرنا ہے۔

نیب معاہدہ

مزید : ملتان صفحہ آخر