امریکی الیکشن،تمام اندازے اور سروے غلط ثابت، امریکی عوام نے ڈونلڈ ٹرمپ کو صدر چن لیا

امریکی الیکشن،تمام اندازے اور سروے غلط ثابت، امریکی عوام نے ڈونلڈ ٹرمپ کو ...
امریکی الیکشن،تمام اندازے اور سروے غلط ثابت، امریکی عوام نے ڈونلڈ ٹرمپ کو صدر چن لیا

  

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) متنازعہ ترین انتخابی مہم اور رائے عامہ کے ہر لمحہ بدلتے جائزوں کے باوجود امریکہ میں صدارتی انتخابات کے حوالے سے تمام اندازے غلط ثابت ہوگئے۔ ری پبلکن پارٹی کے امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ ڈیموکریٹک کی مد مقابل امیدوار ہیلری کلنٹن کو واضح شکست دے کر وائٹ ہاؤس پہنچ گئے۔ ڈونلڈ ٹرمپ  276 ووٹوں کیساتھ  نئے امریکی صدر منتخب ہوگئے ہیں ، وائٹ ہاؤس پہنچنے کے لیے ٹرمپ کو 270 ووٹ درکار تھے جبکہ ہیلری کلنٹن نے 218 ووٹ حاصل کیے ۔ 

ریاست انڈیانا،کینٹکی، نارتھ ڈکوٹا، ساؤتھ ڈکوٹا، ویمونگ، نبراسکا، کنساس،ارکنساس، ٹیکساس، الاباما،انڈیانا، کنٹکی، مسی سپی، میزوری، اوکلاہوما، ساو¿تھ کیرولائنا، ٹینیسی اورویسٹ ورجینیامیں ڈونلڈٹرمپ کامیاب قرار پائے جبکہ انتخابی نتائج میں اہم ترین کردار ادا کرنے والی ریاست فلوریڈا سے کامیابی بھی انہی کے نام رہی۔ دوسری جانب ورمنٹ ،کنیٹی کٹ، نیویارک، ڈیلویئر، ڈسٹرکٹ کولمبیا،الینوائے،میری لینڈ، نیوجرسی، میساجیوسٹس،روڈ آئی لینڈ اورورمونٹ میں ہلیری کلنٹن نے کامیابی سمیٹی ۔دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی کی سیٹ بھی ہلیری کلنٹن نے اپنے نام کی لیکن کچھ فائدہ نہ ہوا۔

صورتحال واضح ہوتے ہی ڈونلڈ ٹرمپ کے حامی امیدوار جشن منانے نکل پڑے جبکہ ڈیمو کریٹک کیمپ میں افسردگی چھاگئی، ہیلری کلنٹن کی انتخابی مہم کے سربراہ جان پوڈسٹا نے اپنے حامیوں سے خطاب کیا، شکست بھی تسلیم کرلی لیکن ہیلری نظر نہ آئیں۔ڈونلڈ ٹرمپ کی غیر متوقع کامیابی پر نت نئے جائزے پیش کرتے امریکی میڈیا نے بھی سر پکڑ لیے جبکہ عالمی سطح پر بھی ری پبلکن پارٹی کے امیدوار کی کامیابی ”شاکنگ نیوز“ کے طور پر لی جاتی رہی۔ جیت کے لئے فیورٹ امیدوارہیلری کلنٹن کو شکست دے کر اوول آفس تک پہنچنے والے ڈونلڈ ٹرمپ امریکہ کے 45 صدر ہونگے جنہیں صدر بننے کے لئے 538میں سے 270الیکٹورل ووٹ درکار تھے۔ڈونلڈ ٹرمپ نے276 الیکٹورل ووٹ حاصل کئے۔14جون1946کو نیویارک میں پیدا ہونے والے ڈونلڈ ٹرمپ پینسلوانیا یونیورسٹی سے اکنامکس میں گریجویٹ ہیں اور اپنے بزنس کے حوالے سے پہنچانے جاتے ہیں۔ ڈونلڈ ٹرمپ کو ایک متنازع شخصیت قرار دیا جارہا تھا ۔

مزید پڑھیں :”کہیں چِیٹ تو نہیں کررہی“ ٹرمپ ووٹ ڈالتے وقت اہلیہ کا بیلٹ پیپر دیکھتے رہے

انتخابی مہم کے دوران ٹرمپ پر خواتین کو جنسی طور پر ہراساں کرنے کے الزامات بھی لگے جبکہ وہ اسلام دشمن اور نسل پرست کے روپ میں بھی سامنے آئے۔ڈونلڈ ٹرمپ تین شادیاں کیں ۔ انھوں نے اپنی پہلی بیوی، اوانا کو طلاق دی، جن سے ان کے تین بچے ہیں۔ بعد میں انھوں نے مارلہ میپلز سے شادی کی، اور طلاق دی۔ ٹرمپ نے سنہ 2005 میں اپنی موجودہ بیوی، سلووینا سے تعلق رکھنے والی ماڈل، ملانیا سے شادی کی۔انہوں نے 1988، 2004 اور 2012 میں صدارتی دوڑ میں حصہ لینے کا عندیہ دیا تھا ۔

مزید :

بین الاقوامی -اہم خبریں -