پی پی اے کے نام نہاد الیکشن غیر قانونی اورغیر جمہوری ہیں،مشتاق احمد

پی پی اے کے نام نہاد الیکشن غیر قانونی اورغیر جمہوری ہیں،مشتاق احمد

  



لاہور( پ ر) یونائیٹڈ فارماسسٹ الائنس کے رہنماؤں مشتاق احمد چوہدری ، پروفیسر بشیر احمد، پروفیسر ڈاکٹر خالد حسین ، ڈاکٹر سید عاطف رضا (صدر پی پی اے پنجاب) عزیر ناگرہ، حسن نئیر، سیف اللہ خان نیازی، اجلال غنی پریس سیکریٹری منور علی، مریم منظور، حافظ اجمل صدیقی فنانس سیکریٹری اور دیگر نے لاہور پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ پی پی اے کے نام نہاد الیکشن غیر قانونی اورغیر جمہوری ہیں ہم ان الیکشن کو مسترد کرتے ہیں اور ان انتخابات کو عدلیہ نے بھی روکنے کا حکم نامہ جاری کر دیا ہے جس کی خلاف ورزی کرنے پر اس الیکشن میں حصہ لینے والے اور الیکشن کروانے والے توہین عدالت کے مرتکب ہونگے۔رہنماؤں نے کہا کہ پی پی اے کی مرکزی باڈی کے صدر قلبِ حسن رضوی نے ایک اعلامیہ جاری کیا ہے کہ جس میں انہوں نے پی پی اے کی مرکزی باڈی سے اعلانِ لاتعلقی کر دیا ہے اور کہا ہے کہ فارماسسٹ پروفیشنل گروپ ( پی پی جی ) نے غیر مناسب اور غیر آئینی طریقے استعمال کرتے ہوئے پی پی اے کی مرکزی باڈی کا الیکشن شیڈول جاری کیا ہے جو کہ مکمل طور پر غیر قانونی ہے ۔ چنانچہ مختلف فارمیسی تنظیموں سے کہا گیا کہ وہ خود جنرل باڈی کا اجلاس بلا کر چیف الیکشن کنوینئر نامزد کریں ۔

جو کہ خود مختار ہواور ایک آزادانہ اور منصفا نہ الیکشن کروانے کا مجاز ہو۔ اس اعلامیے کے بعد ایک جنرل باڈی میٹنگ کا اجلاس پورے پاکستان میں منعقد کیا گیا جس میں مختلف فارمیسی تنظیموں نے بھرپور شرکت کی اور مشترکہ طور پر پروفیسر ڈاکٹر مقصود احمد کو چیف الیکشن کنوینئر نامزد کیا گیا اور نام نہاد کابینہ کے نوٹیفکیشن کو مکمل طور پر مسترد کر دیا۔ پریس کانفرنس میں رہنماؤں نے پی پی جی کی طرف سے پی پی اے سینٹر کے نوٹیفکیشن کو نہ صرف بھرپور انداز میں مسترد کیابلکہ یہ واضح کیا کہ کوئی ایسا اقدام جو فارماسسٹ برادری کے یاپروفیشن کے خلاف ہوگا یا کوئی شخص یا گروپ روڑے اٹکانے کی کوشش کرے گا تو یو پی اے منہ توڑ جواب دے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...