افغانستان علاقائی امن و استحکام کیلئے اپنی ذمہ داری پوری کرے: ممنون حسین

افغانستان علاقائی امن و استحکام کیلئے اپنی ذمہ داری پوری کرے: ممنون حسین

  



اسلام آباد (آئی این پی )صدر مملکت ممنون حسین نے کہا ہے جلال آباد میں پاکستانی سفارت کار کا بے رحمانہ قتل افسوسناک ہے۔ افغانستان کو سفارتکاروں کی حفاظت اور علاقائی امن و استحکام کیلئے اپنی ذمہ داری بھر پور طریقے سے ادا کرنی چاہیے ، پاکستان اس سلسلے میں اپنے برادر ہمسایہ ملک کیساتھ بھر پور تعاون کرے گا۔صدر مملکت نے یہ بات ایوان صد ر میں 107 ویں نیشنل مینجمنٹ کورس کے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے۔ اس موقع پر ریکٹر، نیشنل اسکول آف پبلک پالیسی عظمت علی رانجھا اور سیکریٹری اسٹیبلشمنٹ اسد حیا الدین کے علاوہ دیگر اعلیٰ حکام بھی موجود تھے۔ صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان افغانستان میں امن و ترقی کا خواہاں ہے۔ ا س سلسلے میں افغانستان کو پاکستان پر اعتماد کرنا ہو گا۔ مجھے یقین ہے افغانستان مستقبل میں پاکستان کا قریب ترین دوست ہو گا، جمہوریت کے استحکام کیلئے آئین ہمیں غیر مبہم رہنمائی فراہم کرتا ہے جس کے ذریعے عوام کو اپنے ضمیر کے مطابق رائے کے اظہار اور اپنی خواہشات کے مطابق آزادانہ اور غیر جانبدارانہ انتخاب کے ذریعے حکومت بنانے کا حق دیا گیا ہے۔حال ہی میں حکومت نے انتخابی عمل کو بہتر بنانے کیلئے اصلاحات کی منظوری بھی دی ہے جس سے نظام میں مزید بہتری آئے گی۔ اٹھارھویں ترمیم کے تحت وفاق کی تمام اکائیوں کو ان کی خواہش کے مطابق مزید حقوق بھی مل چکے ہیں، اس سلسلے میں اگر کچھ تحفظات بھی پائے جاتے ہیں تو قومی سطح پر تبادلہ خیال کے ذریعے ان پر غور و فکرکا سلسلہ بھی جاری ہے جس کے نتیجے میں عوام کی امنگوں کے مطابق تمام مسائل کا حل ممکن ہے۔ جمہوریت ایک طرزِ زندگی ہے جس کے استحکام کیلئے معاشرے میں انتہائی نچلی سطح پر ذہن سازی کی ضرورت ہوتی ہے۔ ہمیں اپنے بچوں کی بھی اس سلسلے میں تربیت کرنی چاہیے۔

مزید : صفحہ آخر